The news is by your side.

Advertisement

بلاول زرداری کے اہل خانہ کے ٹیکس پر بھی بات کی جائے، چوہدری نثار

اسلام آباد : وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان نے کہا ہے کہ بلاول بھٹو کے اہل خانہ کی جائیداد پربات کیوں نہیں کی جاتی، انہوں نے بتایا کہ مشاورت کے بعد کراچی میں رینجرزکو اختیارات دیئے جائیں گے۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے اسلام آباد میں ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا، چوہدری نثارعلی خان نے  پیپلز پارٹی کی قیادت کو تنقید کا نشانہ بنا تے ہوئے کہا کہ بلاول بھٹو زرداری کے والد اور دیگراہل خانہ نے کتنا ٹیکس ادا کیا ہے، وہ پہلے انکارکرتے رہے پھر برطانوی عدالت میں سرے محل تسلیم کرلیا۔

انہوں نے کہا کہ بلاول کے نام پر اربوں روپے کی پراپرٹی ہے لیکن ان کا کوئی ٹیکس ریٹرن نہیں۔ سابق حکمرانوں کی دبئی میں رہائشوں کا کوئی اکاؤنٹ نہیں۔ ہم دیکھنا چاہتے ہیں کہ کون کون لوگ کرپشن میں ملوث ہیں۔

وزیرداخلہ کا کہنا تھا کہ بھارتی جاسوس کلبھوشن کی ایران میں سرگرمیوں کے بارے میں مزید معلومات مل گئیں۔ ایران نے کلبھوشن کی تمام تفصیلات فراہم کردی ہیں، کلبھوشن کےساتھی کی بھی معلومات فراہم کی گئی ہیں۔

ایک سوال کے جواب میں وفاقی وزیر داخلہ چودھری نثار نے کہا کہ افغان مہاجرین کے بارے میں فیصلہ وزیراعظم کی واپسی پر ان کی زیرصدارت ہونے والے اجلاس میں آرمی چیف جنرل راحیل شریف کی موجودگی میں ہو گا۔

چوہدری نثار نے کہا کہ وزیراعلیٰ سندھ کے سوا کوئی بھی کراچی آپریشن کا کپتان نہیں ہو سکتا۔ رینجرز کو 30دن کیلئے کسی کو بھی حراست میں رکھنے کا اختیار دینے کے لئے مشاورت کر رہے ہیں۔ مشاورت کے بعد رینجرز کو اختیارات دینگے۔

 

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں