The news is by your side.

Advertisement

11 سالہ بچہ زیادتی کے بعد قتل، ہاتھ پاؤں بندھی لاش برآمد

خانپور: پنجاب کے ضلع خانپور میں گھریلو ملازم نے بچے کو جنسی زیادتی کا نشانہ بنانے کے بعد قتل کردیا۔

اے آر وائی نیوز کی رپورٹ کے مطابق خانپور میں 11 سالہ بچے عبداللہ کو جنسی زیادتی کے بعد قتل کرنے والے ملزم کو پولیس نے چند گھنٹوں میں گرفتار کرلیا۔

سرکل پولیس آفیسر ڈی ایس پی فرخ جاوید کے مطابق تھانہ صدر خانپور کے علاقے موضوع گھنیاں بستی مڈ بنگلہ میں نثار احمد نامی مقامی زمیندار کے 11 سالہ بیٹے عبداللہ کو ان کے ملازم 18 سالہ پرویز نے پہلے جنسی زیادتی کا نشانہ بنایا بعدازاں اسے گلا گھونٹ کر قتل کردیا۔

اطلاع ملنے پر ایس ایچ او سیف اللہ کورائی نے چند گھنٹوں کی تحقیقات کے بعد ابتدائی طور پر تین مشکوک افراد کو گرفتار کیا جن سے تفتیش کے دوران گھریلو ملازم پرویز نے جرم کا اعتراف کرتے ہوئے فضل کماد کے علاقے سے بچے کی ہاتھ پاؤں بندھی لاش برآمد کروادی۔

یہ پڑھیں: فیصل آباد میں گھریلو ملازم نے مالک کے بچے کو قتل کردیا

پولیس کا کہنا ہے کہ ملزم کے خلاف قتل، زیادتی اور اغوا کی دفعات کے تحت مقدمہ درج کرلیا گیا ہے، پولیس کے مطابق گرفتار ملزم کو سخت سزا دلائی جائے گی۔

یاد رہے کہ رواں سال جولائی میں فیصل آباد میں گھریلو ملازم فیضان نے ڈانٹ ڈپٹ سے تنگ آکر مالک کے بچے کو قتل کردیا، بچے کے قتل میں ملوث گھریلو ملازم کو گرفتار کرلیا گیا تھا۔

تھانہ ڈی ٹائپ کالونی پولیس کا کہنا تھا کہ شک کی بنیاد پر گھریلو ملازم فیضان کو حراست میں لے کر تفتیش کی تو اس نے جرم کا اعتراف کرتے ہوئے بتایا کہ اس کا مالک ارشد اسے ڈانٹتا اور اپنے بچوں سے پیار کرتا تھا، میں نے اسی رنجش پر بچوں کو نہر میں پھینکا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں