The news is by your side.

مہاجروں کے پاس اتحاد کے سوا کوئی چارہ نہیں، فاروق ستار

کراچی : ایم کیو ایم بحالی کمیٹی کے سربراہ ڈاکٹر فاروق ستار نے کہا ہے کہ مہاجروں میں یونٹی یکجہتی قائم کرنا ہوگی، اس کے سوا اب کوئی راستہ نہیں۔

یہ بات انہوں نے اے آر وائی نیوز کے مارننگ شو باخبر سویرا میں خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کہی، انہوں نے کہا کہ این اے240 کےنتائج، بلدیاتی الیکشن میں اندرون سندھ میں تشدد ہوئے۔

انہوں نے کہا کہ پولنگ اسٹیشنز سے ڈبے اٹھا کر لے گئے، ایم کیوایم رگنگ کی وجہ سے ہاری، ایم کیوایم کا ووٹرمایوس ہوکر گھر پر بیٹھ گیا ہے یا پھر دیگر جماعتوں کو ووٹ کررہا ہے۔

فاروق ستار کا کہنا تھا کہ مہاجروں میں یونٹی یکجہتی قائم کرنی ہوگی اس کے سوا اب کوئی راستہ نہیں ہے۔ دو سال سےکوشش کررہا ہوں کہ خالد مقبول سے ایک میٹنگ ہوجائے، اس میٹنگ میں بحران سے نکلنے کیلئے مشاورت ہوجاتی۔

ان کا کہنا تھا کہ لانڈھی میں2018میں60ہزار ووٹ پڑے، اب ووٹ83فیصد اُڑ گیا، این اے240میں حیران کن نتائج سامنے آئے اور بہت کم ٹرن آؤٹ رہا۔ بلدیاتی الیکشن میں اندرون سندھ میں تشدد ہوئے، پولنگ اسٹیشنز سے ڈبےاٹھا کر لے گئے۔

فاروق ستار نے کہا کہ ماضی میں ہم سے غلطیاں ہوئی ہیں، اب لوگوں کو یقین دلانا ہےآئندہ یہ غلطی نہیں کریں گے، کسی بھی فورم پر بیٹھنے کے لئے تیار ہوں۔

مہاجروں کے اتحاد اور اس تنظیم کو بحران سے کیسے نکالنا ہے، خالدمقبول سے کہتا ہوں کہ ایک میٹنگ میرے ساتھ کرلیں، کراچی کی4کروڑ کے قریب آبادی کومطمئن نہیں کرسکے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں