The news is by your side.

Advertisement

چیف الیکشن کمشنرسے استعفے کا مطالبہ مسترد کرتے ہیں:‌ سیکریٹری الیکشن کمیشن

اسلام آباد: سیکریٹری الیکشن کمیشن بابر یعقوب نے مطالبہ کیا ہے کہ سیاسی جماعتیں انتخابی نتائج کوتسلیم کریں.

ان خیالات کا اظہار انھوں نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کیا. ان کا کہنا تھا کہ ارکان سے استعفے کے مطالبے پر افسوس ہوا.

بابریعقوب نے کہا کہ ہے کہ اے پی سی کا چیف الیکشن کمشنرسے استعفے کا مطالبہ مسترد کرتے ہیں، غیرملکی مبصرین اورفافن جیسےاداروں نےانتخابات کی تعریف کی.

انھوں نے کہا کہ کوئی شکایت ہے تو آئین میں دیے گئے اقدام پرعمل کریں، کسی امیدوار کو کوئی شکایت ہے، تو قانونی طریقہ اختیارکرے.

بابریعقوب نے کہا کہ چاروں صوبائی حکومت کوانتخابی مہم کےدوران تنبیہ بھی کی گئی، ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی پرفوری کارروائی کی گئی.

سیکریٹری الیکشن کمیشن نے کہا کہ انتخابات میں خواتین کی بطورووٹراورامیدوارشرکت کوسراہا گیا، انتخابی موادکی بروقت منتقلی کی گئی، کہیں سےکوئی شکایت نہیں آئی.

ان کا کہنا تھا کہ انتخابات میں ضابطہ اخلاق پرعمل درآمد کے لئے مانیٹرنگ سیل قائم کیا گیا، انتخابات شفاف طریقےسےانجام کوپہنچے. پرامن اورشفاف بنانے کے لئے سب کے ممنون ہیں.

انھوں نے کاہ کہ 30 ہزارمبصرین نے مختلف اوقات میں الیکشن کےعمل کا معائنہ کیا، الیکشن کے دن 700 کے قریب شکایات ملیں، جن کوفوری حل کیا گیا.

بابر یعقوب نے کہا کہ الیکشن نتائج میں تاخیرسے متعلق نوٹس لیا گیا،تحقیقات جاری ہیں، بلاجواز تنقید سے گریز کیا جائے، مستحکم پاکستان کے لئے کردارادا کریں.

ان کا کہنا تھا کہ انتخابات میں ملک بھرمیں 52 فیصد ٹرن آؤٹ رہا، تمام جماعتوں کے لیے برابری کی بنیادی پراقدامات کیے، امیدواروں کے خلاف نیب کی کارروائیوں کو رکوایا گیا. میڈیا اور ویب سائٹ کے ذریعے معلومات پہنچائی جاتی رہیں.


الیکشن کمیشن نے 26 حلقوں میں ووٹوں کی دوبارہ گنتی کی منظوری دے دی


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں