The news is by your side.

Advertisement

ایلون مسک نے 5.7 بلین ڈالرز فلاحی کاموں کیلیے عطیہ کر دیے

دنیا کے امیر ترین شخص ایلون ماسک نے 5.7 بلین ڈالرز فلاحی کاموں کے لیے عطیہ کر دیے جو دنیا میں اب تک عطیہ کی جانے والی سب سے بڑی رقم تصور کی جاتی ہے۔

سیکیورٹیز اینڈ ایکسچینج کمیشن کے مطابق گزشتہ سال ایلون مسک نے 19 نومبر سے 29 نومبر تک اپنی الیکٹرک کار بنانے والی کمپنی کے 5 ملین سے زیادہ حصص عطیہ کیے۔

حصص کی دستاویزات میں رقم کو عطیہ ظاہر نہیں کیا گیا تاہم رقم ایک نامعلوم فلاحی ادارے کو دی گئی ہے۔

خیال رہے کہ ایلون مسک نے تجویز پیش کی تھی کہ اگر اقوام متحدہ ثابت کر دے کہ 6 بلین ڈالرز دنیا کی بھوک کو ختم کر دیں گے تو میں عطیہ کرنے کے لیے تیار ہوں۔

ٹیسلا کی جانب سے ایلون مسک کے عطیہ کردہ حصص کے بارے میں فی الحال تفصیلات فراہم نہیں کی گئیں۔ 5.7 بلین ڈالرز خیرات کے لیے بڑا عطیہ ہے جو ایلون مسک کے بقول امریکی تاریخ کا سب سے بڑا ٹیکس بل ہوگا۔

ایلون مسک نے کچھ روز قبل 16 بلین ڈالرز سے زیادہ مالیت کے خصص خروخت کرنے کا سلسلہ مکمل کیا تھا۔ ایلون مسک نے ٹویٹ میں کہا تھا کہ وہ سال کے لیے 11 بلین ڈالرز سے زائد کا ٹیکس ادا کریں گے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں