The news is by your side.

Advertisement

بنگلادیشی نژاد برطانوی باکسر رخسانہ بیگم باکسنگ رنگ میں اترنے کیلئے تیار

لندن : بنگلادیشی نژاد برطانوی باکسر رخسانہ بیگم باکسنگ رنگ میں اترنے کیلئے تیار ہے، آج پہلی فائٹ لندن میں لڑیں گی ، رخسانہ نے ورلڈ کک باکسنگ لندن ایسوسی ایشن کا ٹائٹل بھی جیت رکھا ہے۔

تٖفصیلات کے مطابق بنگلادیشی نژاد برطانوی موتھائی اور کک باکسنگ چیمپئن رخسانہ بیگم پروفیشنل باکسنگ کی دُنیا میں قدم رکھنے جا رہی ہیں، رخسانہ کا کہنا ہے کہ عالمی مقابلے میں تھائی باکسنگ چیمپیئن بننا چاہتی تھیں، جو دوسری خواتین کے لیے ایک مثال ہے۔

چونتیس سالہ رُخسانہ بیگم آج ایسٹ لندن کے یارک ہال میں پہلی بار باکسنگ رنگ میں اُتریں گی ،جہاں اُن کا مقابلہ بلغاریہ کی ایوانکا سے ہوگا۔

باکسنگ میں بروس لی اور محمد علی رخسانہ کے آئیڈیل ہیں۔

رخسانہ بیگم کا کہنا تھا کہ میں مسلمان گھرانے سے تعلق رکھتی ہوں اور ایک خاتون ہوں جو کھیلوں میں مردوں کا مقابلہ نہیں کرسکتی، جس کی وجہ سے کافی مشکلات کا سامنا کرنا پڑا لیکن پھر میں نے ہمت کی اور ڈٹ کر مقابلہ کیا۔

خیال رہے 2016  میں بنگلادیشی نژاد برطانوی باکسر رخسانہ بیگم نے حجاب کرنے والی لڑکیوں کے لیے ایک اسپورٹس پلیٹ فارم بھی لانچ کیا تھا۔

رخسانہ بیگم برٹش اور یورپیئن موتھائی چیمپئن ہیں ، انہوں نے ورلڈ کک باکسنگ ایسوسی ایشن کا ٹائٹل بھی جیت رکھا ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پرشیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں