The news is by your side.

Advertisement

برف سے جمی جھیل میں غوطہ، تیراک نے انوکھا کام کردیا

سائبیریا : برف سے ڈھکی جھیل کی گہرائی میں جانے کا عالمی ریکارڈ روسی تیراک نے بنالیا۔ الیکسی مولچانوف کی والدہ بھی ایک ماہر تیراک تھیں۔

روسی تیراک الیکسی مولچانوف نے سائبیریا کی منجمد بیکال جھیل کے نیچے262 گہرائی میں غوطہ لگانے کا نیا عالمی ریکارڈ قائم کر دیا۔ ایک تجربہ کار غوطہ خور کی حیثیت سے الیکسی اپنا سانس 9 منٹ تک روک سکتے ہیں۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق الیکسی مولچانوف نے برف سے جمی جھیل کے اندر 262 فٹ کا فاصلہ 2منٹ کے دورانیے میں طے کرکے عالمی ریکارڈ اپنے نام کرلیا۔ اس موقع پر ایمرجنسی کی صورتحال سے نمٹنے کے لیے خصوصی ٹیم بھی ان کے ہمراہ تھی۔

الیکسی مولچانوف برف سے جمی جھیل کی سطح پربنائے گئے ایک سوراخ کے ذریعے داخل ہوئے اور ان کے جسم کے ساتھ رہنمائی کے لیے ایک رسی باندھی گئی تھی۔ انہوں نے غوطہ لگا کر اپنا 20واں عالمی ریکارڈ بنایا ہے۔

الیکسی مولچانوف کا کہنا تھا کہ وہ گہرائی میں کچھ بھی دیکھ سکتا تھا تاہم اس نے رسی کی مدد سے اپنا ہدف حاصل کیا۔ وہ جھیل کی گہرائی میں موجود سفید پلیٹ کو ہاتھ لگا کر واپس آئے جو 262 فٹ گہرائی میں موجود تھی۔

الیکسی مولچانوف جھیل بیکال فاؤنڈیشن کی ایک فلاحی اور تحقیقی گروپ کے سفیر ہیں جس کا مقصد جھیل کی خوبصورتی کو محفوظ رکھنا ہے۔

اس کی والدہ ناتالیا مولچانوف بھی فری ڈائیونگ کی ماہر تھیں اور فری ڈائیونگ کے دوران الیکسی مولچانوف کی والدہ کی 6 سال قبل موت واقع ہوگئی تھی۔

واضح رہے کہ جھیل بیکال جنوبی سائبیریا روس میں واقع دنیا کی سب سے گہری اور میٹھے پانی کی بڑی جھیلوں میں سے ایک ہے، ساڑھے12ہزار مربع میل کے رقبے پر پھیلی اس جھیل کو سائبیریا کی نیلی آنکھ بھی کہا جاتا ہے۔

یہ جھیل دنیا کے کل میٹھے پانی کے 20 فیصد کو اپنے اندر سموئے ہوئے ہے جبکہ روس کے کل میٹھے پانی کا 90فیصد اس جھیل میں ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں