The news is by your side.

Advertisement

برطانوی شہزادے اور میگن مارکل کی شادی، خصوصی کپ تیار

لندن: برطانوی شہزادے ہیری اور امریکا سے تعلق رکھنے والی ادکارہ میگن مارکل کی شادی کے دعوت ناموں کے لیے مٹی کے کپ تیار کیے گئے جن پر نوبیاہتا جوڑے سے متعلق معلومات ہیں۔

تفصیلات کے مطابق برطانوی شاہی خاندان سے تعلق رکھنے والے شہزادہ چارلز اور شہزادی ڈیانا کے چھوٹے صاحبزادے کی شادی کی تقریب 19 مئی کو جارج چیپل، ونڈسر کاسل میں منعقد کی جائے گی جس کی بڑے پیمانے پر تیاریاں زور و شور سے جاری ہیں۔

قبل ازیں پرنس ہیری کی شادی کے خصوصی دعوت نامے (کارڈ) تیار کیے گئے تھے جن پر امریکا کی انگریزی سنہری رنگ سے تحریک کی گئی تھی، یہ کارڈ تقریب میں شرکت کے لیے 6 سو افراد کو ارسال کیے جاچکے۔

برطانوی خبررساں ادارے کے مطابق شاہی خاندان کے لیے خدمات انجام دینے والی کمپنی ’ایما برج واٹر‘ کی جانب سے یہ کپ تیار کیے گئے جن پر شہزادے اور اُن کی اہلیہ کی زندگی سے متعلق اہم معلومات درج ہیں۔

مزید پڑھیں: برطانوی شہزادے پرنس ہیری اور میگن مارکل کی شادی ، تاریخ کا اعلان

پرنس ہیری اور میگن مارکل کی شادی سے قبل آنے والے ان کپوں کو یادگار اور تقریب میں داخلے کا دعوت نامہ کا اعزاز بھی ہوگا، مٹی کے کپ بنانے والی کمپنی کے ترجمان کا کہنا تھا کہ شاہی خاندان کی طرف سے ہزاروں مگ تیار کرنے کی ہدایت کی گئی ہے۔

واضح رہے کہ ایما برج واٹر نامی کمپنی کا قیام 30 سال قبل عمل میں آیا تھا اور یہ کمپنی 1985 سے صرف شاہی خاندان کے لیے اپنی خدمات انجام دے رہی ہے، قبل ازیں فیکٹری کی جانب سے ملکہ الزبتھ کی 75ویں سالگرہ کے خصوصی مگ جاری کیے گئے تھے بعد ازاں شہزادہ ولیم اور کیٹ کی شادی پر بھی کمپنی نے اس روایت کو زندہ رکھا تھا۔

خیال رہے کہ برطانیہ کے شہزادے اور لیڈی ڈیانا کے چھوٹے صاحبزادے پرنس ہیری نے امریکی اداکارہ میگھن مرکل سے گذشتہ برس دسمبر میں منگنی کی تھی جس کی شاہی خاندان کی جانب سے تصدیق اور شادی کی تاریخ کے اعلان کا وعدہ کیا گیا تھا۔

شاہی خاندان نے وعدے کے مطابق گذشتہ ماہ پرنس ہیری اور میگن مارکل کی شادی کی تاریخ کا حتمی اعلان کیا جس کے مطابق چھوٹے نواب کی شادی 19 مئی کی دوپہر سینٹ جارج چیپل کے ونڈ کاسل میں منعقد کی جائے گی۔

برطانوی میڈیا کے مطابق شادی کی تقریب کے روز مہمانوں کے لیے ظہرانے کا اہتمام بھی کیا جائے گا جس کی میزبانی خود ملکہ برطانیہ الزبتھ خود کریں گی بعد ازاں مذہبی رسم بھی منعقد کی جائے گی۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کےلیے سوشل میڈیا پرشیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں