The news is by your side.

Advertisement

حوالہ ہنڈی کے ذریعے امریکی ڈالر افغانستان پہنچانے والے 8 افراد گرفتار

کراچی: حوالہ ہنڈی کے ذریعے امریکی ڈالر افغانستان پہنچانے والے 8 افراد گرفتار کر لیے گئے۔

تفصیلات کے مطابق ایف آئی اے کمرشل بینک سرکل نے کراچی کے علاقوں گلشن اقبال اور صدر میں چھاپے مار کر آٹھ افراد کو گرفتار کر لیا، ترجمان ایف آئی اے سندھ کا کہنا ہے کہ ملزمان امریکی ڈالر افغانستان پہنچایا کرتے تھے۔

ترجمان کے مطابق حوالہ ہنڈی کاروبار میں ملوث بیسٹ وے ایکسچینج کمپنی کے دفتر میں ایف آئی اے کارروائی میں موبائل فون، لیپ ٹاپ اور دیگر دستاویزات قبضے میں لے لی گئی ہیں۔

کمپنی کے آٹھ افراد کو پولیس نے گرفتار کیا ہے، جن میں کمپنی کے ڈائریکٹر محمد یاسین، منیجر محمد عدنان، کاؤنٹر اسٹاف محمد معراج، اسامہ، جونیئر افسر فہد لمادا، محمد اطہر محبوب، کیس کیریئر سیف الدین اور ثناءاللہ شامل ہیں۔

ایف آئی اے ترجمان کے مطابق ملزمان لائسنس کی آڑ میں حوالہ ہنڈی کے غیر قانونی کاروبار اور سرگرمیوں میں ملوث تھے۔

ملزمان بلوچستان کے شہریوں کو غیر قانونی طور پر (بغیر رسید اور انٹری) امریکی ڈالر فراہم کر رہے تھے، موقع واردات پر موجود گرفتار 2 افراد سیف الدین اور ثناء اللہ دونوں کوئٹہ کے رہائشی ہیں، اور امریکی ڈالر افغانستان پہنچایا کرتے تھے۔

ملزمان سے مجموعی طور پر پاکستانی کرنسی 76 لاکھ روپے، غیر ملکی کرنسی مساوی 30 لاکھ پاکستانی روپے، اور 36394 امریکی ڈالر ضبط کیے گئے ہیں۔

ملزمان افغانستان کی سیاسی صورت حال کا فائدہ اٹھا کر ڈالر کی غیر قانونی منتقلی سے پاکستانی روپے کی قدر کو نقصان پہنچا رہے تھے، ایف آئی اے نے ملزمان محمد یاسین، اور سی ای او ارجمند فاروق و دیگر کے خلاف مقدمہ درج کر لیا ہے، ملزمان سے مزید تفتیش بھی کی جا رہی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں