The news is by your side.

Advertisement

بھارت: امریکی درآمدی مصنوعات پر اضافی محصولات عائد

نئی دہلی: امریکا کی جانب سے دھاتوں کی درآمدی پر اضافی محصولات کے ردعمل میں بھارت نے بھی امریکی مصنوعات پر اضافی محصولات عائد کردیں۔

تفصیلات کے مطابق گذشتہ دنوں امریکا کی جانب سے یہ اعلان کیا گیا تھا کہ وہ اپنے ملک میں درآمد کیے جانے والے اسٹیل اور ایلومینیم پر اضافی محصولات عائد کرے گا بعد ازاں اس کا عملی مظاہرہ بھی ہوا اور یورپی یونین سمیت مختلف ممالک کی جانب سے امریکا پر تنقید بھی کی گئی۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا ہے کہ بھارت نے امریکا سے درآمد کی جانے والی کئی مصنوعات پر ٹیکسوں میں اضافہ کر دیا ہے، اضافی محصولات عائد کی جانے والی مصنوعات کی تعداد انتیس ہے۔

بھارت کی جانب سے یہ اقدامات ٹرمپ انتظامیہ کی جانب سے اسٹیل اور ایلومینیم کی درآمد پر بالترتیب دس اور پچیس فیصد محصولات عائد کیے جانے کے ردِ عمل میں کیے گئے ہیں۔


امریکا کی اضافی محصولات، یورپی یونین نے بھی کمر کس لی


بھارتی وزارت خزانہ کے جاری کردہ نوٹیفیکیشن کے مطابق انتیس امریکی مصنوعات پر اضافی محصولات عائد کیے گئے ہیں، ان میں سے کچھ پر اضافی ٹیکس فوری طور پر لاگو ہوں گے، جب کہ دیگر پر اضافی محصولات کا نفاذ چار اگست سے ہوگا۔

قبل ازیں یورپی یونین نے بھی گذشتہ روز امریکا کی درآمدی مصنوعات پر اضافی محصولات عائد کرنے کا اعلان کیا ہے، جس کا اطلاق یورپی ممالک میں آج سے ہوا ہے۔


امریکا کا چینی درآمدات پر 25 فیصد ٹیکس عائد کرنے کا اعلان


خیال رہے کہ یورپی یونین کی تجارتی امور کی خاتون کمشنر سیسیلیا مالسٹروم کا کہنا تھا کہ اس فیصلے کے تحت امریکی مصنوعات کےدرآمد پر دو عشاریہ آٹھ ارب یورو مالیت کے اضافی ٹیکس عائد کیے جائیں گے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں