The news is by your side.

Advertisement

سودا لینے بازار جانے والا نوجوان واپسی میں دلہن لے آیا

اترپردیش : بھارت میں لاک ڈاؤن کے دوران بازار سے سودا سلف لینے کیلئے جانے والا نوجوان گھر واپس آیا تو اس کے ساتھ دلہن کو دیکھ کر ماں مشتعل ہوگئی، تھانے میں شکایت درج کرادی۔

تفصیلات کے مطابق بھارتی ریاست اترپردیش کے شہر غازی آباد میں کورونا لاک ڈاؤن کے دوران ایک دلچسپ واقعہ پیش آیا ہے، لاک ڈاؤن کے دوران ماں نے اپنے 26سالہ بیٹے گڈو کو باہر سے سودا سلف منگوانے بھیجا، گڈو بازار گیا اور واپسی پر دلہن گھر لے آیا۔

غازی آباد پولیس کے مطابق گڈو کی ماں نے پولیس اسٹیشن آکر شکایت درج کرائی تھی اس نے بیان دیا تھا کہ میں نے اپنے بیٹے گڈو کو لاک ڈاؤن کے دوران گھر کا سودا سلف لانے کے لیے بازار بھیجا تھا، بیٹا واپسی پر سامان کے بجائے اپنے ساتھ اپنی بیوی لے آیا ہے، میں اپنے بیٹے کی اس خفیہ شادی کو کسی حال میں قبول نہیں کروں گی۔

بھارتی چینل این ڈی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق پولیس کا کہنا ہے کہ26 سالہ گڈو کا اپنے بیان میں کہنا ہے کہ دو ماہ قبل اس نے اپنی والدہ سے چھپ کر پسند کی شادی کی تھی۔

گڈو کا کہنا تھا کہ میں اس ڈر سے بیوی کو گھر نہیں لایا کہ ماں ناراض ہوگی، میری بیوی شادی کے بعد دہلی میں ایک کرائے کے گھر میں رہ رہی تھی، لاک ڈاؤن کے دوران کچھ مشکلات پیش آنے پر وہ گھر چھوڑنا پڑا تھا۔

چھبیس سالہ گڈو نے پولیس کو مزید بتایا کہ شادی کے وقت گواہ کی عدم موجودگی کے سبب انہیں شادی کا سرٹیفکیٹ نہیں مل سکا تھا، سوچا تھا کہ لاک ڈاؤن ختم ہوتے ہی شادی کا سرٹیفکیٹ ملنے پر دلہن کو گھر لے آؤں گا مگر تا حال سرٹیفکیٹ نہیں مل سکا ہے۔ دوسری جانب غازی آباد پولیس کی جانب سے گڈو اور اس کی دلہن کو ماں کے ساتھ ان کے گھر رہنے کی اجازت دے دی گئی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں