The news is by your side.

Advertisement

پانچ ہزارسال پہلے انٹرنیٹ اورسیٹلائٹ بھارت نے ایجاد کیا، بھارتی وزیر کا مضحکہ خیز دعوی

نئی دہلی : بھارتی ریاست تریپورہ کے وزیراعلی بِپ لب کمارنے مضحکہ خیز دعوی کیا ہے کہ پانچ ہزارسال پہلے انٹرنیٹ اورسیٹلائٹ بھارت نے ایجاد کیا، بھارت صدیوں سے ٹیکنالوجی استعمال کرتا آیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق مودی کے وزیر بھی ان ہی کی طرح سستی شہرت کے شوقین نکلے، بھارتی ریاست تریپورہ کے وزیراعلی پبلب کمارنے خطاب کے دوران یہ دعوی کرکے سب کوحیران کردیا کہ انٹرنیٹ اورسیٹلائٹ ہزاروں سال پہلے بھارت نے ایجاد کیا تھا۔

وزیراعلیٰ پبلب کمار  نے کہا کہ  سنجے نے دھرت راشٹر  کو ماہ بھارت کی جنگ کا آنکھوں دیکھا حال سنایا تھا جس سے ثابت ہوتا ہے کہ اس وقت وہاں انٹرنیٹ  اور سیٹلائٹ موجود تھا۔

بی جے پی رہنما نے مزید کہا کہ یورپی ممالک اور امریکہ دعوی کر سکتا ہے کہ یہ ان کے ایجاد ہے، یکن یہ اصل میں یہ ہندوستان کی ٹیکنالوجی ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ انٹرنیٹ اور سیٹلائٹ سسٹم بھارت میں لاکھوں سال قبل موجود تھا یہاں تک کہ آج انٹرنیٹ اور سافٹ ویئر ٹیکنالوجی میں ہم آگے ہیں، مائیکرو سافٹ کو دیکھ لیں ، یہ ایک امریکی کمپنی ہے لیکن اس کے زیادہ تر انجنیئر ہمارے ملک سے ہیں۔

تریپورہ کے وزیراعلیٰ کواس مضحکہ خیز دعوے پرتنقید کا سامنا ہے لیکن وہ اپنے دعوی پرقائم ہیں۔

یاد رہے کہ بھارت میں ایسا دعویٰ پہلی بارنہیں ہوا، شہرت کے شوقین وزیراعظم نریندرمودی بھی پلاسٹک سرجری کی ایجاد کا سہرا بھارت کے سرباندھ چکے ہیں۔

اس دعویٰ پر وزیراعظم مودی پر شدید تنقید کی گئی تھی اور بہت سے سائنس دانوں کا کہنا تھا کہ انھیں سائنس اور مذہبی عقائد میں فرق کرنا چاہیے۔

اس سے قبل ہوائی جہاز بھی انڈیا میں ہی ایجاد کرنے کے دعویٰ کئے جا چکے ہیں۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں