The news is by your side.

Advertisement

بھارت میں پولیس کی غنڈہ گردی، مسلمان نوجوانوں پر سرعام تشدد

نئی دہلی : بھارت میں نہتے مسلمانوں پر ہندو انتہا پسندوں کی جانب سے مظالم جاری ہیں، پولیس بھی اس میں پیش پیش ہے، مسلم علاقوں میں گھروں میں گھس کر نوجوانوں کو تشدد کا کا نشانہ بنایا جارہا ہے۔

تفصیلات کے مطابق  بھارت میں عوام کی محافظ پولیس بھی مسلمان دشمن بن گئی، بھارتی ریاست اترپردیش کے شہر دیوبند میں پولیس نے مسلمانوں کے گھروں میں گھس کرمار پیٹ کی اور مسلمان نوجوانوں کوبلا قصور گرفتار کرلیا۔

بنگلورو میں مسلمان نوجوانوں پرسرعام تشدد پر پولیس اہلکار تماشا دیکھتے رہے، مودی سرکار میں ہندو انتہا پسند بے لگام ہوگئے۔ مسلمانوں پر زمین تنگ کرنے لگے،  پولیس بھی غنڈہ گردی کا حصہ بن گئی۔

اترپردیش کے شہر دیوبند میں پولیس نے مسلمانوں کے گھروں پردھاوا بول دیا، نوجوانوں کو سرعام مارا پیٹا گیا، بغیر کسی جرم کے اٹھا کرلے گئی۔

علاوہ ازیں بنگلورو میں دن دہاڑے دو مسلمان نوجوانوں پرتشدد ہوتا رہا اور پولیس اہلکار کھڑے تماشا دیکھتے رہے۔ وہاں موجود لوگ بیچ بچاؤ کے بجائے وڈیو بناتے رہے۔

واضح رہے کہ بھارت میں مسلمانوں کیخلاف نفرت انگیز مہم پر خلیجی ریاستوں کی جانب سے شدید رد عمل بی آیا ہے۔ یو اے ای کے پبلک پراسیکیوشن نے وارننگ جاری کر رکھی ہے کہ سوشل میڈیا سمیت کسی بھی ذریعے مسلمانوں کیخلاف نفرت انگیز اور متعصبانہ پوسٹ پر پانچ سال قید اور پانچ ہزاردرہم جرمانہ کی سزا ہوگی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں