The news is by your side.

Advertisement

صارفین کے ذہنی دباؤ دور کرنے کے لیے نئے فیچر کی آزمائش

سان فرانسسکو: سماجی رابطے کی ویب سے بڑی ویب سائٹ فیس بک اور انسٹاگرام نے صارفین کے ذہنی دباؤ کو ختم کرنے کے لیے نئی سروس کی آزمائش شروع کردی ہے۔

فیس بک کی زیر ملکیت کمپنی انسٹاگرام کے سربراہ ایڈم موسیری نے بتایا کہ ’گزشتہ برس ہم نے صارفین کے دباؤ کو کم کرنے کے لیے ایک فیچر کی آزمائش شروع کی‘۔

انہوں نے بتایا کہ انسٹاگرام پوسٹ کے لائیکس کی تعداد کو چھپانے کی آزمائش شروع کی، جس کے بہت اچھے نتائج سامنے آئے جبکہ کچھ نے اس کی مخالفت کی کیونکہ وہ اپنی پوسٹ پر آنے والی پسندیدگیوں کو نہ صرف دیکھنا چاہتے ہیں بلکہ اس کے ذریعے دوسروں کو متاثر کرنے کے خواہش مند بھی ہیں۔

انسٹاگرام کے سربراہ نے بتایا کہ اب ہم ایک نئی سروس کی آزمائش کرنے جارہے ہیں، جس کے بعد آپ (صارف) اپنے لیے خود ہی بہتر چیز کا انتخاب کرسکے گا۔

مزید پڑھیں: انسٹاگرام لائیکس چھپانے والی سروس کی آزمائش

انہوں نے کہا کہ اب تمام صارفین کی پوسٹ پر لائیکس کی تعداد کو خفیہ رکھنے کی آزمائش کی جارہی ہے۔ ایڈم نے وضاحت کی کہ انسٹاگرام کے علاوہ فیس بک پر بھی اسی فیچر پر کام جاری ہے۔

یاد رہے کہ 18 جولائی 2019 کو انسٹاگرام نے اعلان کیا تھا کہ ہم اپنے صارفین کے ذہنی دباؤ کو ختم کرنے کے لیے کوشاں ہیں جس کے لیے ایپ میں بڑی تبدیلی لائی جائے گی۔

انسٹاگرام اور فیس بک کے ڈائریکٹر میا گارلک کا کہنا تھا کہ لائیکس (پسندیدگیاں) کی تعداد چھپانے کا فیچر آزمائشی طور پر کینیڈا کے صارفین کے لیے پیش کیا گیا، ہمارا یہ تجربہ خاصہ کامیاب رہا اور لوگوں نے اس اقدام کو سراہا۔ اُن کا کہنا تھا کہ جلد آسٹریلیا، نیوزی لینڈ، آئرلینڈ، جاپان اور برازیل کے صارفین بھی اس فیچر سے استفادہ کریں گے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں