The news is by your side.

Advertisement

ایرانی ایٹمی معاہدے کو بچانے کے لیے یورپ کی کوششیں ناکافی ہیں، جواد ظریف

تہران : ایرانی وزیر خارجہ جواد ظریف نے یورپی یونین کے سربراہ برائے توانائی میگوئل اریاس سے ملاقات کے بعد کہا ہے کہ یورپ کی ایرانی ایٹمی معاہدے کو بچانے کے لیے کوششیں ناکافی ہیں۔

تفصیلات کے مطابق رواں ماہ کے آغاز میں امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے ایران کے ساتھ طے شدہ جوہری معاہدہ منسوخ کیا گیا تھا، جس کے بعد انہیں عالمی طاقتوں بالخصوص یورپی ممالک کی جانب سے شدید تنقید کا سامنا کرنا پڑرہا ہے، بعد ازاں امریکا نے ایران جوہری ڈیل سے دست برداری کے بعد ایران پر نئی اقتصادی پابندیاں بھی عائد کر دیں ہیں۔

ایران کے وزیر خارجہ جواد ظریف کا کہنا تھا کہ امریکا کی ایران کے ساتھ جوہری معاہدے کی منسوخی کے بعد سے یورپ کی متعدد کمپنیاں ایران میں کی گئ سرمایہ کاری ختم کرنے کی باتیں کررہی ہیں۔

جواد ظریف کا کہنا ہے کہ یورپی کمپنیوں کی جانب سے ایران میں کی گئی سرمایہ کاری ختم کرنے کی باتیں یورپ کے ایٹمی معاہدوں کے حوالے سے کیے گئے وعدوں کی مخالفت کررہی ہیں۔ اگر ایران کی اقتصادیات کا خیال نہیں رکھا گیا تو ہم ایٹمی ہتھیاروں کی تیاری پر دوبارہ کام شروع کردیں گے۔

دوسری جانب یورپی یونین کے کمشنر برائے توانائی میگوئل ایریاس نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ یورپ کسی نئے معاہدے کے حوالے مذاکرات نہیں کرے گا، بلکہ سنہ 2015 میں ایران کے ساتھ طے ہونے والے جوہری معاہدے پر ہی باقی رہے گا۔

یاد رہے کہ امریکا کے صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے رواں ماہ کے اوائل میں اپنے یورپی اتحادیوں کی گذارشات کو درگزر کرتے ہوئے ایران کے ساتھ طے شدہ معاہدہ ختم کرکے ایران پر نئی پابندیاں عائد کردی تھی۔

یورپی یونین کے عہدیدار میگوئل اریاس کا کہنا تھا کہ یورپ کا مؤقف واضح ہے یورپی یونین ایران کے ساتھ ہونے والے معاہدے پر قائم ہے اور یہ ہی معاہدہ کار آمد ثابت ہوگا۔‘‘

ایران کے وزیر خارجہ جواد ظریف کا کہنا تھا کہ یورپی یونین کے سربراہ برائے توانائی میگوئل اریاس کے ساتھ ہونے والی ملاقات سے واضح ہوا ہے کہ سنہ 2015 میں طے ہونے والے ایٹمی معاہدے کو بچانے کے لیے یورپ کی کوششیں اور حمایت کافی نہیں ہیں۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں