site
stats
عالمی خبریں

دورہ جاپان، امریکی صدر کی بیٹی ایوانکا ٹرمپ کے لباس پر تنقید

خواتین کو ہراساں کرنا بالکل بھی برداشت نہیں کیا جائے گا، ایوانکا

ٹوکیو :جاپانی ایوانکا ٹرمپ کے انداز کے بہت بڑے پرستار ہیں، جاپان کے دورے میں جہاں ایوانکا توجہ کا مرکز بنی وہی ان کے اسٹائل اور ڈریسنگ پر بھی جاپان میں بحث ہورہی ہے۔

تفصیلات کے مطابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے دورے سے قبل ہی ان کی بیٹی ایوانکا ٹرمپ جاپان پہنچ گئیں، ایوانکا ٹرمپ نے ٹوکیو وومن امپورمنٹ نام سے منعقدہ ایک سیمینار سے خطاب کیا۔

ایوانکا کا کہنا تھا کہ عام طور پر ہمارا سسٹم کام کرنے کی خواتین کو مناسب عزت اور احترام دینے میں ناکام ہوچکا ہے لیکن خواتین کو ہراساں کرنا بالکل بھی برداشت نہیں کیا جائے گا۔

سیمینار میں پہنے گئے ایوانکا کے لباس اور خطاب کے دوران حاضری کم ہونے پر بھی کڑی تنقید کی گئی اور میڈیا نے آڑے ہاتھوں لیا۔

سماجی رابطوں کی ویب سائٹس پر ہلکے گلابی رنگ کے لباس کو غیر مناسب قرار دیا گیا اور حاضری کم ہونے پر ان کا خوب مذاق اڑایا گیا ، کہا گیا کہ ایوانکا نے خالی کرسیوں سے خطاب کیا۔

جاپانی صدر کےعشائیے میں ایوانکا ٹرمپ نے انتہائی مہنگا سوٹ پہنا، جس کی قیمت تقریباََ 2000 ڈالر ہے۔

دوسری جانب امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اپنے دورِ صدارت کے پہلے ایشیائی دورے کا آغاز جاپان سے کیا اور پہلے مرحلے میں جاپان پہنچےامریکی صدر کے استقبال کے لیے تیار ہونے والے زیادہ تر پلے کارڈز پر بھی ایوانکا نمایاں ہیں۔

امریکی صدر نے جاپانی وزیراعظم سے ملاقات کی جبکہ ڈونلڈ ٹرمپ نے جاپانی وزیراعظم اور ماہر گولف کھلاڑی کیساتھ گولف کھیلا۔

اس دورے کے دوران امریکی صدر کی روسی صدر سے ملاقات بھی متوقع ہے۔

کہا جا رہا ہے ٹرمپ شمالی کوریا کی جارحیت انگیزی پر اتحادی ممالک کو اعتماد میں لیں گے، ڈونلڈ ٹرمپ جاپان کے بعد جنوبی کوریا، چین، ویتنام اور فلپائن جائیں گے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top