The news is by your side.

جیکولین فرنینڈس کی گرفتاری کا خدشہ ٹل گیا

نئی دہلی: بالی ووڈ اداکارہ جیکولین فرنینڈس کی گرفتاری کا خدشہ ٹل گیا، عدالت نے انھیں عبوری ضمانت دے دی۔

بھارتی میڈیا کے مطابق جیکولین فرنینڈس کو پیر کے روز 200 کروڑ روپے کے منی لانڈرنگ کیس میں مجرم سکیش چندر شیکھر کے خلاف عبوری ضمانت مل گئی۔

دہلی کی پٹیالہ ہاؤس کورٹ نے اداکارہ کو 50 ہزار روپے کے مچلکے پر عبوری ضمانت دے دی۔

ایڈیشنل سیشن جج شیلندر ملک نے اداکارہ کی ضمانت کی درخواست پر انفورسمنٹ ڈائریکٹوریٹ (ای ڈی) سے جواب طلب کر لیا۔ جب تک ای ڈی اپنا جواب داخل نہیں کرتا، جیکولین کی باقاعدہ ضمانت کی درخواست عدالت میں زیر التوا رہے گی۔

منی لانڈرنگ کے اس کیس کی اگلی سماعت 22 اکتوبر کو ہوگی۔

خیال رہے کہ عدالت میں جیکولین کے گرفتار مبینہ بوائے فرینڈ سکیش چندر شیکھر کی ضمنی چارج شیٹ داخل کی جا چکی ہے، اس لیے اداکارہ کی قانونی ٹیم نے اُن کی گرفتاری کے خدشے کے پیش نظر ضمانت قبل از گرفتاری کی درخواست دائر کی تھی۔

جیکولین سے دہلی پولیس کے اقتصادی جرائم ونگ نے گزشتہ ہفتے 7 گھنٹے سے زیادہ تفتیش کی تھی، یہ دوسری بار تھا جب انھیں اس کیس میں پوچھ گچھ کے لیے طلب کیا گیا تھا۔

تحقیقات کے مطابق چندر شیکھر نے اداکارہ کے ایجنٹ پرشانت کو ان کی سال گرہ پر موٹر سائیکل دینے کی پیش کش کی تھی، لیکن اُس نے لینے سے انکار کر دیا تھا، تاہم چندر شیکھر نے موٹر سائیکل اور اس کی چابیاں پرشانت کے گھر پر چھوڑ دی تھیں جسے بعد میں پولیس نے اپنی تحویل میں لے لیا۔

چندر شیکھر اس وقت جیل میں ہیں، ان پر الزام عائد ہے کہ اس نے ادیتی سنگھ اور شویندر سنگھ سے 215 کروڑ بھارتی روپے بھتے کی شکل میں وصول کیے اور اسی سلسلے میں ملزمان کے خلاف تحقیقات بھی جاری ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں