The news is by your side.

Advertisement

کابل دھماکے : حملہ آوروں کو قیمت چکانا پڑے گی، جوبائیڈن

واشنگٹن : امریکی صدر جو بائیڈن نے کہا ہے کہ کابل ایئرپورٹ دھماکوں میں ہلاک ہونے والے امریکی فوجی ہیرو ہیں، حملہ آوروں کو اس کی بھاری قیمت چکانا پڑے گی۔

واشنگٹن میں صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ کابل ایئرپورٹ پر ہونے والے دھماکوں میں جو زندگیاں ہم نے کھوئی ہیں وہ آزادی کی خدمت میں دی گئیں، دھماکوں میں ہلاک امریکی فوجی ہیرو ہیں۔؎

امریکی صدر کا کہنا تھا کہ ہم جانتے ہیں کہ کابل دھماکوں کے پیچھے کون سی طاقت ملوث ہے، دھماکوں میں طالبان اور داعش ملی بھگت کے کوئی شواہد نہیں ملے۔

جو بائیڈن نے واضح الفاظ میں کہا کہ ہم نہ معاف کریں گے نہ بھولیں گے، دشمن کو اس کی بھاری قیمت چکانا پڑے گی، حملہ کرنے والوں کو افغانستان میں طاقت سے جواب دیں گے۔

امریکی صدر نے بتایا کہ حملہ آوروں کی قیادت کو پکڑنے اور ان کے اثاثوں کو نشانہ بناکر تباہ کرنے کے احکامات دیے ہیں، اپنے کمانڈروں کوحکم دیا ہے کہ حملے کیلئےآپریشنل پلان تیار کریں۔

ایک سوال کے جواب میں جو بائیڈن نے کہا کہ افغانستان سے فوج کے انخلاء کا عمل جاری رکھیں گے،31 اگست تک انخلاء کا عمل مکمل کرلیا جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ فوجی قیادت نے چاہا تو کابل میں مزید فوجیوں کی تعیناتی کی منظوری دوں گا، انخلا کی ڈیڈلائن کے بعد رہ جانے والوں کو نکالنے کی پوری کوشش کریں گے۔

سابق صدر نے طالبان سے یکم مئی تک انخلاء مکمل کرنے کا معاہدہ کیا تھا، مذاکرات نہ کرتے تو یکم مئی سے پہلےانخلا کیسے ہوسکتا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں