The news is by your side.

Advertisement

لیلیٰ واسطی نے اسکرین سے غائب رہنے کی درد ناک وجہ بتا دی

پاکستان شوبز انڈسٹری کی مقبول اداکارہ لیلیٰ واسطی نے طویل عرصے اسکرین سے غائب رہنے کی درد ناک وجہ بلآخر بیان کر دی۔

نجی چینل کے شو میں گفتگو کرتے ہوئے اداکارہ لیلیٰ واسطی نے انکشاف کیا کہ میں لوکیمیا (کینسر) جیسے موذی مرض میں مبتلا ہوگئی تھی، لوکیمیا کی تشخیص کے بعد ڈاکٹروں نے مجھے ایک بار کہا تھا کہ میرے پاس زندہ رہنے کے لیے صرف 48 گھنٹے ہیں۔

لیلیٰ واسطی نے اے آر وائی ڈیجیٹل کے ڈرامے ”ڈنک“ اور ”آزمائش“ سمیت متعدد ڈراموں میں اپنی اداکاری کے جوہر دکھائے۔

شو میں گفتگو کرتے ہوئے لیلیٰ واسطی نے اپنے درد ناک ماضی کے بارے میں بات کی جس کی وجہ سے وہ کافی عرصہ ٹی وی اسکرین سے غائب رہیں۔

 

View this post on Instagram

 

A post shared by L A I L A W A S T I (@lailawasti)

اداکارہ نے کہا کہ ڈاکٹروں نے ایکیوٹ مائیلوڈ لیوکیمیا کی وجہ سے کیموتھراپی کروانے کا کہا، مجھ سے تحقیقی مقاصد کے لیے خون کا عطیہ کرنے کو کہا گیا جس پر میں رضا مند ہوگئی، پہلے دن ہی کیموتھراپی کی وجہ سے جلد کا رنگ سیاہ ہوگیا تھا۔

 

View this post on Instagram

 

A post shared by L A I L A W A S T I (@lailawasti)

لیلیٰ واسطی نے کہا کہ بیماری کے پورے سفر میں شوہر کی توجہ حاصل رہی، انہوں نے میری اچھے سے دیکھ بھال کی۔

 

View this post on Instagram

 

A post shared by L A I L A W A S T I (@lailawasti)

لیلیٰ واسطی نے اپنے شوبز کیرئر کا آغاز نوے کی دہائی میں شروع کیا تھا۔ بعد ازاں وہ شادی کے بعد کینیڈا منتقل ہوگئی تھی اور ایک عرصے تک پاکستان کی ڈرامہ انڈسٹری سے دور رہیں۔ یہ دوری بیماری کے سبب رہی۔

 

View this post on Instagram

 

A post shared by L A I L A W A S T I (@lailawasti)

Comments

یہ بھی پڑھیں