معروف فٹبالر لیونل میسی نے اسرائیلی فٹبال کلب کی رکنیت حاصل کرلی Lionel Messi
The news is by your side.

Advertisement

لیونل میسی نے اسرائیلی فٹبال کلب کی رکنیت حاصل کرلی

یروشلم : معروف فٹبالر لیونل میسی نے غاصب صیہونی ریاست اسرائیل کے ’بیٹر یروشلم‘ نامی فٹبال کلب میں شمولیت اختیار کرلی ہے۔

تفصیلات کے مطابق ارجنٹینا سے تعلق رکھنے والے فٹبال کی دنیا کے معروف کھلاڑی اور بارسلونا کلب کےاسٹار لیونل میسی نے رواں ہفتے مقبوضہ فلسطین پر قبضہ کرنے والے اسرائیل کے نسل پرست فٹبال کلب کی رکنیت حاصل کرلی ہے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا ہے کہ میسی نے کلب کی اعزازی رکنیت شمولیت اختیار کرنے سے پہلے ہی حاصل کرلی تھی۔

اسرائیلی فٹبال کلب کی جانب سے سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر ایک ویڈیو جاری کی گئی تھی جس میں کلب کے سربراہ موشے ہوگیگ کو اعزازی رکنیت دیتے ہوئے دکھایا گیاہے۔

خیال رہے کہ لیونل میسی بیٹر یروشلم فٹبال کلب کی رکنیت حاصل کرنے والے پہلے شخص ہیں۔

عرب میڈیا کا کہنا ہے کہ بیٹر یروشلم فٹبال کلب اسرائیل میں نسل پرست اور انتہائی دائیں بازوں کے کھلاڑیوں اور مداحوں کا اہم مرکز ہے، جہاں میچوں کے دروان مسلمان اور عربوں کےخلاف شدید نعرے بازی بھی کی جاتی ہے۔

عرب میڈیا کا کہنا ہے کہ سنہ 2003 میں روسی ارب پتی نے ایک مسلمان فٹبالر کو بیٹر یروشلم کلب میں داخل کرنے کی کوشش کی تھی جس پر نسل پرست صیہونیوں کی جانب سے احتجاج کیا گیا تھا اورنسل پرستوں نے کلب کے ہیڈکوارٹر کو بھی آگ لگادی تھی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں