The news is by your side.

Advertisement

کراچی میں اسٹیٹ ایجنٹ نے نوٹوں کی گڈی اڑا کر گلے پر چھری پھیر لی

کراچی: شہر قائد میں  اسٹیٹ ایجنٹ نے خودکشی کی کوشش کرتے ہوئے نوٹوں کی گڈی اڑا کر گلے پر چھری پھیر لی۔

اے آر وائی نیوز کی رپورٹ کے مطابق کراچی پریس کلب کے باہر اسٹیٹ ایجنٹ نے نوٹوں کی گڈی اڑانے کے بعد گلے پر چھری پھیر لی، پولیس کا کہنا ہے کہ خودکشی کی کوشش کرنے والے زخمی شخص کا کسی سے رقم کا تنازع تھا۔

پولیس کا کہنا ہے کہ خودکشی کی کوشش کرنے والا اسٹیٹ ایجنٹ لیاری کے علاقے آگرہ تاج کالونی کا رہائشی ہے۔

ریسکیو ذرائع کے مطابق مذکورہ شخص کو زخمی حالت میں اسپتال منتقل کردیا گیا ہے جہاں ڈاکٹرز ا س کی جان بچانے کی کوشش کررہے ہیں۔

پولیس کے مطابق مذکورہ شخص کو اسپتال میں طبی امداد کی فراہمی جاری ہے،طبیعت میں بہتری کے لیے اس کا بیان ریکارڈ کرکے واقعے کی معلومات حاصل کی جائیں گی۔

کراچی، کورونا کے دوران قرضوں سے پریشان تاجر نے خودکشی کرلی

واضح رہے کہ رواں سال اکتوبر میں کراچی کے علاقے گلشن اقبال میں کورونا کے دوران قرضوں سے پریشان تاجر نے اپنی زندگی کا خاتمہ کرلیا تھا، پولیس کا کہنا تھا کہ مرنے والے تاجر پر 70 کروڑ روپے مارکیٹ کا قرضہ تھا۔

ذرائع کا کہنا تھا کہ تاجر نے مرنے قبل اپنے آڈیو پیغام میں کہا کہ ’دل برداشتہ ہوں، میرے لیے کسی نے بہت مسائل پیدا کردئیے ہیں، میرے بیوی بچے بھوکیں نہ مریں بس یہ دیکھ لینا۔‘

متوفی کا آڈیو پیغام میں کہنا تھا کہ ’میری 7 سے 8 انشورنس پالیسیاں بھی ہیں، لوگوں سے پیسے لینے ہیں اور دینے بھی ہیں سب سے میری طرف سے معافی مانگ لینا۔‘

تاجر کا مزید کہنا تھا کہ ’میں نے کسی کو کچھ کہہ دیا ہو تو اس پر معافی مانگتا ہوں، میں بہت دلبرداشتہ ہوگیا ہوں، میرے لیے جس نے مسائل بھی پیدا کیے اللہ اس کا بھی بھلا کرے۔‘

Comments

یہ بھی پڑھیں