The news is by your side.

Advertisement

نیب نے مریم نواز کو حراست میں لے لیا

گرفتاری چوہدری شوگر ملز کیس میں عمل میں لائی گئی

لاہور: مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز کو قومی احتساب بیورو (نیب) کی ٹیم نے حراست میں لے لیا ہے، گرفتاری چوہدری شوگر ملز کیس میں عمل میں لائی گئی ہے۔

تفصیلات کے مطابق نیب نے سابق وزیر اعظم نواز شریف کی صاحبزادی مریم نواز کو چوہدری شوگر ملز کیس میں طلب کیا تھا تاہم انہوں نے پیش ہونے سے معذرت کرلی اور جیل میں قید اپنے والد میاں نواز شریف سے ملنے چلی گئی تھیں۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ مریم نواز کو کوٹ لکھپت جیل میں اپنے والد نواز شریف سے ملاقات کے بعد واپس جاتے ہوئے جیل کے احاطے سے حراست میں لیا گیا ہے اور اب انہیں نیب ہیڈ کوارٹرز پہنچا دیا گیا ہے۔

ذرائع کے مطابق مریم نواز کے نیب کے سامنے پیش نہ ہونے پر باقاعدہ ان کے وارنٹ جاری کیے گئے تھے اور گرفتاری کے وقت انہیں وارنٹ دکھائے بھی گئے اس کے بعد گرفتاری عمل میں لائی گئی۔ مریم نواز کو تحویل میں لینے کے لیے نیب کی 4 گاڑیاں کوٹ لکھپت جیل پہنچیں۔

مریم نواز کو کہاں رکھا جائے گا؟

مریم نواز کو ان کے اپنے ہی گھر میں نظربند کیا جائے گا یا کہیں اور رکھا جائے گا، اس بات کا فیصلہ نیب آفس میں کچھ دیر میں کیا جائے گا۔

نیب ٹیم نے مریم نواز کی گرفتاری سے چیئرمین نیب کو بھی آگاہ کردیا ہے۔ مریم نواز کو کل احتساب عدالت میں پیش کیا جائے گا۔

یاد رہے کہ گزشتہ ماہ 31 جولائی کو چوہدری شوگر ملز کیس میں طلبی پر مریم نواز نیب دفتر میں پیش ہوئی تھیں، ان کے بھائی حسن اور حسین نواز بیرون ملک ہونے کے باعث پیش نہیں ہوئے تھے۔

نیب کی مشترکہ ٹیم نے 45 منٹ تک مریم نواز سے تحقیقات کی تھیں اور سوالنامہ بھی دیا تھا، سوالنامے میں چوہدری شوگر ملز سے متعلق جواب مانگے گئے تھے۔

نیب نے مریم نواز کو 8 اگست کو دوبارہ طلب کیا تھا اور ریکارڈ بھی ساتھ لانے کی ہدایت کی تھی جبکہ حسن اور حسین نواز کو دوبارہ طلبی کے لیے نوٹس جاری کرنے کا کہا گیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں