الشباب نے صومالی صدرکے بھتیجے کو قتل کردیا -
The news is by your side.

Advertisement

الشباب نے صومالی صدرکے بھتیجے کو قتل کردیا

موغادیشو: شدت پسند اسلامی گروہ الشباب نے صومالی صدر حسن شیخ محمد کے بھتیجے کو ایک اور شخص کے ہمراہ قتل کردیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق القائدہ سے تعلق رکھنے والے گروپ نے ایک کار پر حملہ کرکے دو افراد کو قتل کیا ہے جن میں سے ایک کا نام لبان عثمان ہے جبکہ دوسرے کا نام عبدالقادرمحمد کو قتل کردیا ہے۔

موغا دیشو کے پولیس میجر نور کے مطابق عثمان حال ہی میں بیرون ِملک سے واپس لوٹے تھے اور موغا دیشو اسپتال میں بحیثیت ڈائریکتر ذمہ داریاں سنبھالنے والے تھے۔

دوسری جانب الشباب کے ترجمان شیخ ابو مصاب کا کہنا ہے کہ عثمان کو اس لئے نشانہ بنایا گیا ہے کہ وہ صدارتی محل میں ایک انتہائی اہم عہدے پر فائز تھے۔

واضح رہے کہ صومالیہ کی افواج نے 2011 میں موغا دیشو سے الشباب کو نکال باہر کیا تھا لیکن شدت پسند گروپ کی جانب سےگوریلا جنگ جاری ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں