The news is by your side.

Advertisement

کورونا وائرس : سعودی عرب میں جدید ٹیکنا لوجی کا استعمال

ریاض : سعودی عرب میں کرونا وائرس سے بچاؤ کے پیش نظر شہری خریداری کے لیے جدید ٹیکنالوجی کا استعمال  کررہے ہیں، سامان کی نقد کے بجائے بینک کارڈ سے ادائیگی کی جارہی ہے۔

تفصیلات کے مطابق کورونا وائرس کی روک تھام کے پیش نظر سعودی عرب میں خریداری کے بعد ادائیگی کا نیا طریقہ کامیابی سے رائج ہو رہا ہے۔

خریداروں نے اپنے طرز زندگی میں بہت سی عادات میں تبدیلیوں کو اپنانا شروع کردیا ہے۔ مارکیٹوں سے خریداری کے بعد نقد ادائیگی کے بجائے بینک کارڈ سے ٹچ سسٹم پے منٹ کا طریقہ اپنایا جا رہا ہے۔

فنانشل سروسز کمپنی ماسٹر کارڈ کے سروے کے مطابق کورونا وائرس سے بچاؤ کے لیے خریداری کے بعد ادائیگی کے اس بہترین حفاظتی ٹیکنالوجی کے طریقہ کار کو اپنایا جا رہا ہے۔

سروے میں یہ بات سامنے آئی ہے کہ65 فیصد سعودی صارفین روزمرہ کی خریداری کے بعد ادائیگی کے اس محفوظ ، تیز رفتار اور صاف ستھرے ٹچ فری طریقے کوترجیح دے رہے ہیں۔

81فیصد صارفین کا کہنا ہے کہ کورونا وائرس کے پھیلاؤ کے بعد سعودی عرب میں آن لائن خریداری کی طرف جانا پڑرہا ہے اور اب ہم خریداری کے اس طریقہ کار کو جاری رکھیں گے۔

ماسٹر کارڈ برائے سعودی عرب اور بحرین کے جنرل مینجر جے کے خلیل نے بتایا ہے کہ ہمارے ادائیگی کے اس طریقہ کار کی پیشکش کو سعودی مانیٹری اتھارٹی(ساما) کی جانب سے مکمل تائید و حمایت حاصل ہے۔

تمام مقامی بینکوں کو ادائیگی کے لیے بلامعاوضہ خدمات پیش کرنے اور ادائیگی کی حد میں اضافہ کا فیصلہ مقامی معیشت کے ساتھ اس کا پختہ عزم ظاہر کرتا ہے۔

سعودی عرب میں کورونا وائرس کے پھیلاؤ کی روک تھام کے سلسلے میں ادائیگی کی جدید ٹیکنالوجی کا یہ طریقہ کار مناسب طریقے سے اپنایا جا رہا ہے۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں