The news is by your side.

Advertisement

محمدشامی کی حمایت: کوہلی کو شیرخوار بیٹی کے ریپ اور قتل کی دھمکی

بھارتی کرکٹ ٹیم کے کپتان ویرات کوہلی کو مسلمان بولر محمد شامی کی حمایت کرنا مہنگا پڑگیا، انتہاپسند ہندوؤں نے کوہلی کو شیرخوار بیٹی کیساتھ زیادتی کرکے قتل کرنے کی دھمکی دیدی۔

پاکستان سے تاریخی شکست پر بھارت کے انتہا پسند ہندوؤں آپے سے باہر ہوچکے ہیں اور بھارتی کا ہار ذمہ دار مسلمان بولر محمد شامی کو قرار دے رہے ہیں اور ساتھ ہی ساتھ ان کی حمایت کرنے والی شخصیات کو شدید تنقید کا نشانہ بنارہے ہیں۔

انہیں شخصیات میں بھارتی کرکٹ ٹیم کے کپتان ویرات کوہلی بھی شامل ہیں جنہوں نے محمد شامی کی حمایت کرتے ہوئے کہا کہ ‘کسی سے مذہبی بنیاد پر نفرت کرنا قابل افسوس ہے، ہم محمد شامی کی 200 فیصد حمایت کرتے ہیں‘۔

کوہلی کی جانب سے شامی کی حمایت کا بیان جاری ہونے پر بھارتی انتہا پسند ہندوؤ شدید طیش میں آگئے اور ویرات کوہلی کو سنگین نتائج کی دھمکی دے ڈالی۔

سوشل میڈیا پلیٹ فارمز پر ناصرف ویرات کوہلی بلکہ ان کی اہلیہ انوشکا شرما کو بھی دھمکیاں دی جا رہی ہیں کہ ان کی 10 ماہ کی بیٹی یا قتل کر دیا جائے گا یا اسے ریپ کا نشانہ بنا دیں گے۔

جس آئی ڈی سے دھمکی دی گئی تھی وہ جنوبی بھارت سے چلائی جارہی تھی لیکن اسکرین شاٹ انٹرنیٹ پر وائرل ہوتے ہی بھارتی شہری پروفائل تصویر اور ذاتی معلومات آئی ڈی پر تبدیل کرکے خود کو پاکستانی ظاہر کرنے کی ناکام کوشش کررہا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں