site
stats
بزنس

لاہور ہائی کورٹ میں مہنگے پیٹرول اور زائد سیلز ٹیکس کے خلاف سماعت

Petroleum prices

لاہور: پیٹرولیم مصنوعات کی زائد قیمتیں اور زائد سیلز ٹیکس کی وصولی کے معاملے پر لاہورہائی کورٹ نے حکومت، وزارت پیٹرولیم اور اوگرا کو نوٹس جاری کردیا، حکومت پیٹرولیم مصنوعات پر ساڑھے پینتس فیصد سیلز ٹیکس وصول کر رہی ہے۔

پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے اور زائد سیلز ٹیکس کی وصولی کے خلاف لاہورہائی کورٹ میں دائر درخواست میں درخواست گزار کا کہنا تھا کہ عالمی مارکیٹ میں پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کمی ہوئی ہے جبکہ پاکستان میں مہنگا پیٹرول فروخت کیا جا رہا ہے، حکومت پیٹرولیم مصنوعات پر اضافی سیلز ٹیکس وصول کر رہی ہے ۔

درخواست گزار نے عدالت سے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں کم کرنے کیلئے احکامات جاری کرنے کی درخواست بھی کی، حکومت پیٹرول پر بیس فیصد جبکہ ڈیزل پر ساڑھے پینتیس فیصد سیلز ٹیکس وصول کر رہی ہے تاہم  ہائی اوکٹین پر سیلز ٹیکس کی شرح ساڑھے اکیس فیصد ہے۔

یاد رہے کہ رواں ماہ کے شروع میں  حکومت نے آئندہ ماہ پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں کو برقرار رکھنے کا اعلان کرتے ہوئے سیلز ٹیکس بڑھا دیا تھا۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top