The news is by your side.

Advertisement

مراکش کی بلند و بالا چوٹیوں پر یورپی خواتین سیاح قتل، ایک شخص گرفتار

رباط: مراکش کے سیاحتی مقام پر ڈنمارک اور ناروے سے تعلق رکھنے والی دو سیاحوں کو تیز دھار آلے سے قتل کردیا گیا، قتل کے شبے میں ایک شخص کو گرفتار کرلیا گیا۔

غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق مراکش کے سیاحتی پہاڑی سلسلے اٹلس کی بلند چوٹی پر قائم ایک کیمپ سے ناروے اور ڈنمارک کی دو سیاح طالبات کی لاشیں ملی ہیں، طالبات کو تیز دھارے آلے سے قتل کیا گیا ان کی گردن پر نشانات واضح ہیں۔

لاشوں کی شناخت ناروے کی 28 سالہ طالبہ مارین کے نام سے ہوئی ہے تاہم ڈنمارک سے تعلق رکھنے والی طالبہ کی شناخت نہیں ہوسکی ہے۔

مزید پڑھیں: آسٹریلیا کے سیاحتی مقام سے 7 افراد کی لاشیں برآمد

رپورٹ کے مطابق ناروے کی یونیورسٹی میں زیر تعلیم دونوں طالبات دوست تھیں اور کرسمس کی تعطیلات کے دوران سیاحتی مقام آئی تھیں۔

مراکش پولیس نے سیاح طالبات کے ممالک کو قتل سے متعلق آگاہ کردیا ہے جبکہ ایک ملزم کو گرفتار کرنے کا بھی دعویٰ کیا ہے، ملزم سے مزید تفتیش جاری ہے جبکہ دیگر کی گرفتاری کے لیے چھاپے مارے جارہے ہیں۔

ناروے کی مقتول طالبہ کی والدہ نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر بیٹی کی تصویر شیئر کرتے ہوئے لکھا کہ دونوں طالبات تمام تر حفاظتی انتظامات کے ساتھ مراکش کے سیاحتی مقام پر گئی تھیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں