The news is by your side.

Advertisement

اوکاڑہ میں سُسر نے بہو کو مبینہ طور پر زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا

اوکاڑہ: صوبہ پنجاب کے ضلع اوکاڑہ میں سسر نے بہو کو مبینہ طور پر زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا۔

اے آر وائی نیوز کی رپورٹ کے مطابق پنجاب کے ضلع اوکاڑہ کے نواحی گاؤں میں سسر نے اپنے 2 ساتھیوں کے ساتھ مل کر بہو کو مبینہ زیادتی کا نشانہ بنایا۔

پولیس کا کہنا ہے کہ متاثرہ خاتون کا شوہر روزگار کے سلسلے میں باہر گیا ہوا تھا، ملزمان خاتون کو زیادتی کا نشانہ بنانے کے بعد فرار ہوگئے۔

پولیس کا کہنا ہے کہ خاتون سے زیادتی کے واقعے کا مقدمہ درج کرلیا گیا ہے، ملزمان کی تلاش میں چھاپے مارے جارہے ہیں، ملزمان کو جلد گرفتار کرکے قانونی کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔

مزید پڑھیں: اوکاڑہ میں خالو نے سالی کی بیٹی کو زیادتی کا نشانہ بنادیا

واضح رہے کہ 10 اکتوبر کو اوکاڑہ کے نواحی گاؤں فور ایل میں خالو نے سالی کی بیٹی کو مبینہ زیادتی کا نشانہ بنایا تھا، حاملہ ہونے کے بعد حمل ضائع کروانے کے دوران بچی انتقال کرگئی تھی۔

پولیس کا کہنا تھا کہ والدین کے جھگڑے کے باعث لڑکی خالو کے پاس رہتی تھی، ملزم خالو غلام انور اور اس کی بیوی ساجدہ بی بی کو حراست میں لے لیا گیا ہے۔

اوکاڑہ پولیس کا کہنا تھا کہ بچی کی والدہ کی مدعیت میں مقدمہ درج کرکے مزید تحقیقات جاری ہیں، بچی کا پوسٹ مارٹم کرکے نعش ورثا کے حوالے کردی گئی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں