The news is by your side.

Advertisement

بھارتی ڈپٹی ہائی کمشنر دفتر خارجہ طلب، ایل او سی کی خلاف ورزیوں پر شدید احتجاج

اسلام آباد: پاکستان نے بھارتی ڈپٹی ہائی کمشنر کو دفترخارجہ طلب کر کے ایل او سی کی خلاف ورزیوں پرشدید احتجاج کیا ہے.

تفصیلات کے مطابق دفتر خارجہ نے موقف اختیار کیا ہے کہ بلا اشتعال فائرنگ کےنتیجے میں 3 فوجی اہل کار شہید ہوئے.

دفتر خارجہ کے مطابق بھارت کی جانب سے لیپا اور بٹل سیکٹرمیں بلا اشتعال فائرنگ کی گئی، فائرنگ سے نائیک تنویر،لانس نائیک تیمور، سپاہی رمضان شہید ہوئے.

بھارتی فوج کی جانب سے لگاتار سیزفائرکی خلاف ورزی کی جارہی ہے، سیز فائرکی خلاف ورزی سے خطے کے امن کو خطرات لاحق ہیں.

دفتر خارجہ نے واضح‌کیا ہے کہ بھارتی خلاف ورزیوں سے خطےمیں اسٹریٹجک غلطی ہوسکتی ہے، بھارتی فوج ایل اوسی کااحترام کرے.

پاکستان کی جانب سے یہ بھی مطالبہ کیا گیا کہ بھارتی فوج اقوام متحدہ ملٹری آبزرورگروپ کو کردار ادا کرنے دے.

مزید پڑھیں: بھارت کے یوم آزادی پر پاکستان بھر میں یوم سیاہ، سرکاری عمارتوں پر قومی پرچم سرنگوں

خیال رہے کہ آج مقبوضہ کشمیر میں بھارتی حکومت کی جانب سے کرفیو کا مسلسل گیارہواں روز ہے، جنت نظیر وادی دنیا کی سب سے بڑی جیل کی صورت اختیار کرگئی۔

بھارتی حکومت کی جانب سے مقبوضہ وادی کی خصوصی حیثیت آرٹیکل 370 اور 35 اے کے خاتمے کے کشمیر میں‌ کرفیو نافذ ہے۔

نہتے اور آزادی کی آواز اٹھانے والے حریت پسند کشمیریوں کے لیے جنت نظیر وادی دنیا کی سب سے بڑی جیل کی صورت اختیار کرگئی کیونکہ مسلسل کرفیو کے باعث وہاں اشیائے خوردونوش، ادویات سمیت غذائی اجناس کی شدید قلت پیدا ہوگئی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں