The news is by your side.

Advertisement

صدر ٹرمپ مسئلہ کشمیر پر ثالثی کے لیے سنجیدہ ہیں: پاکستانی سفیر اسد مجید

دنیا بھر میں بھارتی یوم جمہوریہ پر مودی کے خلاف مظاہرے، آکسفرڈ کے طلبہ کے نریندر مودی کے خلاف نعرے

ہیوسٹن: پاکستان سفیر اسد مجید نے کہا ہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ مسئلہ کشمیر پر ثالثی کے لیے سنجیدہ ہیں۔

امریکا میں تعینات پاکستانی سفیر نے یہ بات اے آر وائی نیوز سے خصوصی بات چیت کرتے ہوئے کہی، اسد مجید کا کہنا تھا کہ پوری دنیا کی توجہ مسئلہ کشمیر پر مرکوز ہے، امریکی صدر بھی اس مسئلے پر سنجیدہ ہیں۔

پاکستانی سفیر نے کہا کہ مختلف امریکی شہروں میں یوم یک جہتئ کشمیر پر مذاکرے اور سیمینار ہوں گے، کشمیریوں کو ان کا حق خود ارادیت ملنا چاہیے۔ خیال رہے کہ 5 فروری کو پاکستان سمیت پوری دنیا میں یوم یک جہتئ کشمیر منایا جائے گا۔

دریں اثنا، دنیا بھر میں بھارتی یوم جمہوریہ پر مودی کے خلاف مظاہرے کیے گئے، مختلف ملکوں میں ہندو، مسلم، سکھ اور دیگر کمیونٹی کے افراد پلے کارڈز اٹھائے سڑکوں پر نکلے اور انھوں نے مودی کے فاشسٹ اقدامات کے خلاف نعرے لگائے۔

بھارت کے نام نہاد یوم جمہوریہ پر دنیا بھر میں کشمیریوں اور خود بھارتی عوام نے مودی سرکار کا مکروہ چہرہ دنیا کو دکھایا، برطانیہ میں کئی مقامات پر مظاہرے ہوئے، آکسفرڈ میں یونی ورسٹی طلبہ نے نریندر مودی کے خلاف نعرے لگائے، اس دوران لندن کی فضا میں بھی فیض کی نظم گونجتی رہی۔

لندن میں بھارتی ہائی کمیشن کے باہر احتجاج میں سکھ، کشمیری، آسام، ناگالینڈ اور تامل ناڈو کے شہری بھی شریک ہوئے، گلاسگو میں بھی بھارتی پالیسیوں کے خلاف آواز بلند کی گئی، پیرس میں بھی کشمیریوں اور پاکستانیوں کی بڑی تعداد نے مودی سرکار کے خلاف احتجاج کیا۔ یورپی یونین کے دارالحکومت برسلز میں بھارت کا یومِ جمہوریہ جمّوں و کشمیر لبریشن فرنٹ اور کشمیر کونسل ای یو نے یوم سیاہ کے طور پر منایا۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں