site
stats
سندھ

مذہبی انتہاء پسندی کی وجہ سے درگاہیں تک محفوظ نہیں، بلاول بھٹو زرداری

bilawal

بھٹ شاہ : پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ مذہبی انتہاء پسندی کی وجہ سے درگاہیں تک محفوظ نہیں، صوفی ازم کےپیغام کوپھیلانےکی ضرورت ہے۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے درگاہ شاہ عبدالطیف بھٹائیؒ کے دورے کے موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا، بلاول بھٹو نے کہا کہ صوفی ازم کا فلسفہ مقامی نہیں بلکہ عالمگیرحیثیت رکھتاہے۔

انہوں نے کہا کہ شاہ عبداللطیف بھٹائیؒ نے اپنے کلام میں پسے ہوئے طبقات اورخواتین کو موضوع بنایا، آج ملک میں مذہبی انتہاپسندی کی وجہ سےدرگاہیں تک محفوظ نہیں، درگاہوں سےہم نےلاشیں اٹھائیں۔

بلاول کا کہنا تھا کہ کچھ لوگوں نےمذہب کی اصل روح کوزخمی کیا، ان لوگوں نےمذہب کو اپنے مقاصد کے لیےاستعمال کیا، ہمیں اس صورت حال میں صوفی ازم کےپیغام کوپھیلانےکی ضرورت ہے، آئیں ہم بھی بھٹ شاہ کی سرزمین سے امن کاپیغام دیں۔


مزید پڑھیں: حکومت نے ہرپاکستانی کے گھرپر پٹرول بم گرادیا،بلاول بھٹو


بلاول بھٹو نے کہا کہ ہرسال شاہ لطیف بھٹائی کے مزار پرحاضری اور سلام پیش کرتےہیں، میرےنانا ذوالفقاربھٹو اور ماں بینظیر بھٹو بھی باقاعدگی سے درگاہ بھٹائی پرحاضری دیتی تھیں، اسی تسلسل کو برقرار رکھنے کے لئے میں بھی آج یہاں آیا ہوں۔


مزید پڑھیں: شہید بینظیرکا خواب پولیو فری پاکستان مکمل کریں گے، بلاول


ان کا کہنا تھا کہ سسی کی جدوجہد کو پڑھتاہوں تو مجھے اپنی ماں کی جدوجہد یاد آتی ہے، ماروی کی داستان مجھے اپنی ماں کی یاد دلاتی ہے، میری والدہ اپنے لوگوں سے ملنے جلاوطنی ترک کرکے وطن واپس آئیں، ان کا کہنا تھا کہ مجھے خوشی ہے کہ آج سندھ کا سب سے بڑا ایوارڈ شاہ لطیف ایوارڈ تقسیم کیا۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top