The news is by your side.

Advertisement

فیس بک کے غلط استعمال پر پہلی بار تین سال قیداورجرمانے کی سزا

سرگودھا : سوشل میڈیا کے غلط استعمال پرپاکستان میں پہلی بار سزا دے دی گئی۔ لیکن نفرت انگیز مواد پھیلانے والوں کو کھلی چھوٹ ملی ہوئی ہے۔

پاکستان میں سائبر کرائم بل تو بن گیا لیکن کارروائی صرف جعلی اکاؤنٹ بنانے والوں اور بلیک میلرز کے خلاف کی جارہی ہے۔

کبھی محبت کوبدنام کرنےوالوں کےخلاف کارروائی ہوئی توکہیں اکاؤنٹ ہیک کرنے والوں کےگردشکنجہ کساگیا۔لیکن نفرت انگیز موادکسی کو دکھائی نہیں دیتا۔ 

پاکستان میں پہلی بار سماجی رابطے کی ویب سائٹ پرجعلی اکاؤنٹ بنانےاورلڑکی کوبلیک میل کرنےوالےملزم کوتین سال قیداورجرمانے کی سزا سنائی گئی ۔

سرگودھا میں فیس بک پرغیراخلاقی مواد شئیر کرنے پر پرچہ کاٹا گیا، سوشل میڈیاکےذریعےدہشت گردی اور فرقہ واریت پروان چڑھ رہی ہے۔

رواں سال صرف دو افراد کو فرقہ وارانہ مواد پوسٹ کرنے پر سزائیں دی گئیں، کالعدم تنظیمیں نہ صرف سوشل میڈیا پر سرگرم ہیں بلکہ اپنے ایجنڈے کو آگے بڑھانے کے لئے ویب سائٹس کا استعمال بھی کر رہی ہیں۔

۔نیشنل ایکشن پلان کے تحت نفرت انگیزمواد کی نشرواشاعت بھی ایک جرم ہے۔ لیکن پی ٹی اے کوشاید کالعدم تنظیموں ۔کے اکاؤنٹ نظر نہیں آتے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں