The news is by your side.

Advertisement

کورونا وائرس : سعودی عرب میں مقیم غیر ملکیوں کا مثالی اقدام

ریاض : کورونا وائرس کی عالمی وبا سے بچنے کیلئے دنیا بھر میں احتیاطی تدابیر اپنائی جارہی ہیں، ماسک اور سینی ٹائزر کی کھپت میں اضافہ ہوگیا ہے، ایسے میں سعودی عرب میں غبیر ملکی درزی ماسک تیار کرکے شیریوں میں تقسیم کررہا ہے۔

تفصیلات کے مطابق سعودی عرب میں مقیم غیرملکی درزی کورونا وائرس کی وبا سے نمٹنے کے لیے کپڑے کے ماسک تیارکرکے سعودی شہریوں اور مقیم غیرملکیوں میں مفت تقسیم کرنے لگے.

سعودی ذرائع ابلاغ کے مطابق الافلاج کمشنری میں کام کرنے والے دو غیرملکی درزیوں کا وڈیو کلپ سوشل میڈیا پر بہت وائرل ہے جس میں دیکھا جاسکتا ہے کہ دو غیرملکی درزی حفاظتی ماسک تیار کرکے تحفے کے طور پر سعودی شہریوں اور مقیم غیرملکیوں میں تقسیم کررہے ہیں۔

غیرملکی درزیوں کا کہنا ہے کہ وہ ہزاروں کی تعداد میں حفاظتی ماسک الافلاج کمشنری کے ایک، ایک حصے میں تقسیم کریں گے اس کے بعد مملکت کے دیگر علاقوں کا رخ کیا جائے گا.

الافلاج میں درزیوں کی نگراں کمیٹی نے حفاظتی ماسک تیار کرکے تحفے کے طور پر پیش کرنے والے یمنی اور بھارتی درزیوں کی خدمات کا اعتراف کیا ہے. کمیٹی کا کہناہے کہ یہ دونوں درزی اب تک تین ہزار ماسک تقسیم کرچکے ہیں۔

جازان میں ایک یمنی درزی حفاظتی ماسک تیار کرکے پورے علاقے میں مفت تقسیم کررہا ہے. یمنی درزی نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ کورونا کی وبا کو روکنے میں اس کا یہ معمولی سا حصہ ہے.

یمنی درزی کا کہنا ہے کہ وہ سعودی عرب میں36 برس سے مقیم ہے.اس نے یہاں قیام کے دوران کبھی محسوس نہیں کیا کہ وہ پردیس میں ہے۔

یمنی کا کہنا ہے کہ یمن کے لیے سعودی عرب بھی مسلسل مدد کر رہا ہے، یمن کے لیے عالمی امدادی کانفرنس کی میزبانی بھی اسی کا تسلسل ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں