The news is by your side.

Advertisement

خطرے کی گھنٹی ، زرمبادلہ کے ذخائر پہلی بار سنگل ڈیجٹ پر آگئے

کراچی: اسٹیٹ بینک کے زرمبادلہ کے ذخائر پہلی بار سنگل ڈیجٹ پر آگئے اور ذخائر 9 ارب 72 کروڑ 29 لاکھ ڈالر رہ گئے۔

تفصیلات کے مطابق ملک میں رواں مالی سال میں پہلی بار اسٹیٹ بینک کے زرمبادلہ کے ذخائر سنگل ڈیجٹ پر آگئے، اسٹیٹ بینک کی جانب سے تین سے چھیاسٹھ ملین ڈالر کی بیرونی ادائیگیوں کے بعد زرمبادلہ کم ہو کر 9 ارب باہتر کروڑ انتیس لاکھ ڈالر رہ گئے جبکہ کمرشل بینکوں کے ذخائر 6 ارب چار کروڑ اسی لاکھ ڈالر پر ہیں۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ اگر رواں ماہ آئی ایم ایف سے پاکستان کو نو سو ملین ڈالر نہ ملے تو ملک مزید معاشی بحران کا شکار ہو سکتا ہے۔

ماہرین کے مطابق حکومت نےایک ہفتے میں پٹرولیم مصنوعات پر 60 روپے جبکہ بجلی پر تقریبا 4 روپے کا اضافہ کردیا جبکہ نیپرا نے پہلی جولائی سے بجلی مزید سات روپے اکیانوے پیسے فی یونٹ مہنگی کرنے کی منظوری دے دی ہے، جس سے ملک میں فی یونٹ بجلی چوبیس سے پچیس روپے کا ہوجائے گا۔

اس حوالے سے ماہرمعاشیات خرم شہزاد نے اے آر وائی نیوز سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کہا تھا کہ ہمارے یہاں ڈالرز کی گروتھ کم ہے ، پیٹرول کی قیمت میں اضافے سے مہنگائی میں اضافہ ہوگا تو عام آدمی پر بوجھ پڑے گا۔

آئی ایم ایف کی شرائط ہوتی ہے آپ یہ کرینگے تو قرض ملےگا، گزشتہ حکومت نے اضافہ کرنا تھا انہوں نے بھی نہیں کیا، اس حکومت نے بھی پیٹرول کی قیمت میں وقت پر اضافہ نہیں کیا ، میں سمجھتا ہوں دونوں حکومتیں اس کی ذمہ داری ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں