The news is by your side.

Advertisement

سپریم کورٹ نے پی آئی اے کوطیاروں سے قومی پرچم ہٹانے سے روک دیا

اسلام آباد : سپریم کورٹ آف پاکستان نے قومی ایئرلائن پی آئی اے کو جہازوں سے قومی پرچم ہٹانے سے روک دیا۔

تفصیلات کے مطابق چیف جسٹس میاں ثاقب نثارنے پی آئی اے کے طیاروں سے قومی پرچم ہٹائے جانے کا نوٹس لیتے ہوئے قومی ایئرلائن کو جہازوں سے قومی پرچم ہٹانے سے روک دیا۔

چیف جسٹس آف پاکستان نے ریمارکیس دیے کہ جھنڈے کی جگہ ایک جانورکی تصویر لگائی جا رہی ہے، ایک جانور کی تصویرپینٹ ہونے پرکتنی لاگت آئے گی۔

ایم ڈی پی آئی اے مشرف رسول نے جواب دیا کہ مارخور قومی جانور ہے اس کی تصویر پینٹ کی جا رہی ہے، ایک طیارے پر 27 لاکھ کی لاگت آئے گی۔

چیف جسٹس نے ریمارکس دیے کہ لاگت 27 نہیں 34 لاکھ روپے ہے، کیا پی آئی اے منافع میں ہے جو ایسے کام کررہی ہے، انہوں نے کہا کہ حکومت کی جانب سے پی آئی کو بہتری کے لیے 20 ارب کا بل آؤٹ پیکچ دیا گیا نہ کہ جہازوں کو پینٹ کرنے کے لیے دیا گیا۔

انہوں نے ایم ڈی پی آئی اے سے سوال کیا کہ کل میری پی آئی کی فلائٹ ڈیڑھ گھنٹے لیٹ تھی کیا آپ تاخیر کی وجہ تاخیر لہ وجہ بتاسکتے ہیں؟ جس پرایم ڈی نے جواب دیا کہ جہاز کی مرمت تاخیر کی وجہ بنی۔

چیف جسٹس نے استفسار کیا کہ آپ کی بھابی پی آئی اے میں کیا کررہی ہیں؟ ایم ڈی پی آئی اے نے جواب دیا کہ میرا کوئی رشتے دار پی آئی اے میں نہیں، حلفاََ کہتا ہوں کسی رشتے دار کو بھرتی نہیں کیا۔

ایم ڈی پی آئی اے مشرف رسول نے عدالت عظمیٰ کو بتایا کہ اب تک صرف ایک طیارے کوہی پینٹ کیا گیا ہے، بقیہ طیاروں کو رنگ نہیں کریں گے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں