The news is by your side.

Advertisement

کینیڈا: 12لاکھ ڈالر کی انعامی رقم نے خالہ بھانجے کو ایک دوسرے کا دشمن بنادیا

اوٹاوا : 12 لاکھ کینیڈین ڈالر کی انعامی رقم نے خالہ بھانجے کو ایک دوسرے کے خلاف کردیا، معاملہ عدالت میں جاپہنچا۔

تفصیلات کے مطابق براعظم امریکا کے ملک کینیڈا کی ایک خاتون اور اس کے بھانجے نے 12 لاکھ کینیڈین ڈالر کی رقم لاٹری میں جیتی، تاہم انعامی رقم کا چیک ملنے کے بعد خاتون نے اپنے بھانجے کو آدھی رقم دینے سے انکار کردیا۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا تھا کہ لاٹری کمیٹی کی جانب سے دیئے جانے والے چیک پر خاتون اور ان کے بھانجے دونوں کا نام درج ہے، تاہم خاتون کا کہنا ہے کہ میں نے لاٹری میں اپنے بھانجے کا نام اس لیے دیا تھا کیوں وہ اس کی قسمت اچھی ہے، لیکن اس کا مطلب یہ نہیں کہ آدھی انعامی رقم اسے دے دوں۔

کینیڈین خاتون باربارا ریڈیک کا کہنا تھا کہ میں اپنے بھانجے کے خلاف عدالت میں کیس کروں گی اور اس سلسلے میں وکیل سے بات ہوگئی ہے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے سے گفتگو کرتے ہوئے خاتون کے بھانجے نے بتایا کہ لاٹری خریدتے ہوئے دونوں کے درمیان آدھی آدھی انعامی رقم رکھنے کا معاہدہ طے ہوا تھا، تاہم خاتون کا کہنا ہے بھانجا جھوٹ بول رہا ہے۔

برطانوی خبر رساں ادارے کے مطابق لاٹری کمیٹی کی خاتون سربراہ کا کہنا ہے کہ ’خاتون کی لالچ دیکھ کر بہت حیرت ہوئی، عموماً لوگ لاٹری کی رقم خیراتی اداروں میں عطیہ کردیتے ہیں‘


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں‘ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کےلیے سوشل میڈیا پرشیئر کریں

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں