The news is by your side.

Advertisement

سینیٹ الیکشن سے قبل نون لیگ کو بڑا نقصان

لاہور: ایوان بالا کے انتخابات سے قبل نون لیگ کو بڑا دھچکا پہنچا ہے، جہاں اہم لیگی رہنما کے کاغذات نامزدگی مسترد کردئیے گئے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق الیکشن کمیشن نے مسلم لیگ کے سینئر رہنما اور سابق وفاقی وزیر سینیٹر پرویز رشید کے کاغذات نامزدگی پر گذشتہ روز محفوظ کیا جانے والا فیصلہ سنادیا ہے۔

الیکشن کمیشن نے پی ٹی آئی کی جانب سے پرویز رشید کے کاغذات نامزدگی پر اعتراضات کو درست قرار دیتے ہوئے ان کے کاغذات نامزدگی مسترد کردئیے ہیں۔

پی ٹی آئی کی جانب سےپرویزوشید کےکاغذات پراعتراضات کیےگئےتھے، مجموعی طور پر لیگی رہنما کی کاغذات نامزدگی پر چھ اعتراضات سامنے آئے تھے، تاہم الیکشن کمیشن نے پانچ کو مسترد کیا۔

پرویز رشید کے کاغذات نامزدگی صرف ایک اعتراض پر مسترد ہوئے، لیگی رہنما کے کاغذات نامزدگی پنجاب ہاؤس کے واجبات کی عدم ادائیگی پر مسترد ہوئے۔

بعد ازاں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے پرویز رشید نے کہا کہ جس کی تقریر عمران خان سے برداشت نہیں ہوتی وہ آواز خاموش کرنا چاہتے ہیں، الیکشن کمیشن کےذریعےمیرے جیسےامیدوار انھیں کانٹےکی طرح کھٹکتےہیں۔

پرویز رشید نے الزام عائد کیا کہ میری نامزدگی مسترد کرنے کا طریقہ انجینئرڈ ہے، اب انجینئرڈ ڈیفالٹ کےذریعے انتخاب سے روکنے کی کوشش کی جارہی ہے، مجھ پر نام نہاد ڈیمانڈز ڈالی گئیں، مجھے کبھی کسی کی طرف سے اطلاع نہیں دی گئی تھی۔

یہ بھی پڑھیں:  پی ڈی ایم کے متفقہ امیدوار یوسف رضا گیلانی کے کاغذات نامزد گی منظور

پرویزرشید کا مزید کہنا تھا کہ انتخاب میں پہلے پیسوں کےذریعےخریدنےکی کوشش کی جاتی تھی، لوگوں کودباؤ بلیک میلنگ اور مرضی سے ووٹ کیلئےاستعمال کیاجاتاتھا، اب الیکشن کمیشن آف پاکستان کو بھی اس میں فریق بنالیاگیاہے۔

لیگی رہنما کا کہنا تھا کہ جس محکمے کی طرف سےڈیمانڈ کی گئی اور کہا گیا کہ میں نے رقم ادا کرنی ہے، رقم ادا کرنےجاتاہوں تو افسران اپنی نشستوں اور دفاترسے غائب ہوجاتے ہیں، مجھے کوئی بینک اکاؤنٹ نمبر نہیں دے رہےجہاں رقم جمع کرادوں، جعلی ڈیمانڈ ختم کرنے کیلئے پیسے جمع کراناچاہتاہوں کوئی وصول نہیں کررہا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں