The news is by your side.

Advertisement

شہباز شریف کی جانب سے قومی اسمبلی میں کی گئی تقریر کی وضاحت

اسلام آباد: وزیر اعظم پاکستان میاں شہباز شریف نے قومی اسمبلی میں کی گئی اپنی تقریر کی وضاحت کر دی۔

تفصیلات کے مطابق وزیر اعظم نے گزشتہ روز قومی اسمبلی میں اپنی تقریر کے حوالے سے ایک ٹویٹ میں وضاحت کی ہے کہ اس تقریر کا بنیادی مقصد یہ بتانا تھا کہ جمہوری نظام کو مؤثر طریقے سے چلنے دینا چاہیے، ورنہ ہم سب ایک دائرے ہی میں گھومتے رہیں گے۔

شہباز شریف نے ٹویٹ میں لکھا: "قومی اسمبلی میں میری تقریر کا بنیادی مقصد یہ تھا کہ جمہوری نظام ہموار ہو، اور مؤثر طریقے سے چلے۔”

وزیر اعظم نے ایک بار پھر اپنے بیان سے جمہوری نظام میں عدلیہ کی مداخلت کا تاثر دیتے ہوئے لکھا کہ اس بات کو سمجھنا ہوگا کہ تمام ریاستی ادارے آئین کے متعین دائرہ کار کے اندر رہتے ہوئے کام کریں۔

شہباز شریف نے وضاحت کی کہ آئین نے جو دائرہ کار متعین کیا ہے، اداروں کو اس میں رہتے ہوئے کام کرنا ہوگا، اور "اس  بات کو سمجھے بغیر ہم ایک دائرے میں گھومتے رہیں گے اور کہیں نہیں پہنچیں گے۔”

اگر فیصلہ کرنا ہے تو حق کے ساتھ ہو امتیازی سلوک قبول نہیں، وزیراعظم

واضح رہے کہ گزشتہ روز وزیر اعظم شہباز شریف نے قومی اسمبلی میں اظہار خیال کرتے ہوئے کہا تھا کہ عدالت بلائے تو سب کو احترام سے جانا چاہیے، لیکن اگر فیصلہ کرنا ہے تو انصاف اور حق کی بنیاد پر کرنا ہوگا۔ یہ نہیں ہو سکتا کہ آپ میرے ساتھ کچھ، اور کسی اور کے ساتھ کچھ برتاؤ کریں، امتیازی سلوک قبول نہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں