The news is by your side.

Advertisement

انٹلکچوئل پراپرٹی رائٹس: بروس لی کی تصویر، بیٹی نے مقدمہ دائر کردیا

70 کی دہائی میں بروس لی کا نام سنیما کے شائقین کے لیے اہمیت اختیار کر گیا تھا۔ مداح اس کی فلم کا بے چینی سے انتظار کرتے اور اپنے محبوب اداکار کی ایک جھلک دیکھنے کو بے تاب رہتے۔ مارشل آرٹ کے اس ماہر کی فلموں نے دنیا بھر میں تہلکہ مچا دیا تھا۔

شہرت اور مقبولیت کی بلندیوں کو چھونے والے بروس لی نے مختصر عمر پائی۔ شینن کی عمر صرف چار سال تھی جب ان کے والد کا انتقال ہوا۔

شینن اپنے والد کی اکلوتی اولاد ہیں۔ وہ امریکی شہریت رکھتی ہیں۔ شینن لی کو اداکارہ اور مارشل آرٹسٹ کے طور پر پہچانا جاتا ہے۔ وہ ایک کاروباری شخصیت بھی ہیں۔

اسی شینن لی کے حوالے سے ایک خبر یہ ہے کہ ان کے ادارے نے چین کی ایک فاسٹ فوڈ کمپنی پر مقدمہ دائر کیا ہے۔ یہ مقدمہ مارشل آرٹس کے ماہر اور فلم اسٹار بروس لی کی تصویر بغیر اجازت استعمال کرنے پر دائر کیا گیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق شینن لی کے بروس لی انٹر پرائزز نے ریسٹورنٹ چین کنگ فو کیٹرنگ مینجمنٹ پر مقدمہ کرتے ہوئے مؤقف اپنایا ہے کہ یہ ریسٹورنٹ انٹلکچوئل پراپرٹی رائٹس کی خلاف ورزی کا مرتکب ہوا ہے۔

عدالت سے اس کے خلاف کارروائی کی درخواست کرتے ہوئے بتایا گیا ہے کہ ریسٹورنٹ کی جانب سے ادائیگی کے بغیر 15 سال تک اپنے لوگو میں عالمی شہرت یافتہ اداکار بروس لی کی تصویر استعمال کی گئی ہے۔ اس حوالے سے ریسٹورنٹ نے طریقۂ کار کے مطابق اجازت لی اور نہ ہی کوئی معاہدہ کیا جب کہ ادائیگی بھی نہیں کی گئی۔

یہ مقدمہ چین کے انٹلکچوئل پراپرٹی رائٹس کی عدالت میں دائر کیا گیا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں