The news is by your side.

Advertisement

وفاقی بجٹ رضیہ بٹ کا ناول ہے، شیخ رشید

اسلام آباد: سربراہ عوامی مسلم لیگ شیخ رشید احمد نے وفاقی بجٹ 2017-18 کو رضیہ بٹ کا ناول قرار دیتے ہوئے کہا کہ آج عوام دشمن بجٹ پیش کیا گیا۔

شیخ رشید نے وفاقی بجٹ پر ردعمل دیتے ہوئے کہا کہ مزدوروں کی کم سے کم تنخواہ 25 ہزار ہونی چاہیے آج پیش کیا جانے والا بجٹ ناول کے سوا کچھ نہیں۔

سربراہ عوامی مسلم لیگ نے کہا کہ 14 یا 15 ہزار میں پورا گھر چلانا ناممکن ہے اگر وزیر خزانہ اتنے ماہر معاشیات ہیں تو 15 ہزار روپے میں ایک گھر کا بجٹ بنا کر دکھائیں۔


پڑھیں : ’’ وفاقی بجٹ 2017-18 پیش کردیا گیا‘‘


انہوں نے کہا کہ یہ اشرافیہ کا بجٹ ہے اور اشرافیہ کے لیے ہے غریب عوام کے لیے کبھی بجٹ میں کچھ نہیں ہوتا اس بجٹ میں بھی غریبوں کے لیے کچھ خاص نہیں۔

شیخ رشید نے پارلیمنٹ کے باہر احتجاج کرنے والے کسانوں پرشیلنگ اور ہوائی فائرنگ کی سخت الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا کہ آج پاکستان کی ریڑھ کی ہڈی میں چھرا گھونپا گیا اور کسانوں کے ساتھ ظلم کیا گیا۔

انہوں نے کہا کہ بجٹ سے اور تو کچھ نہیں ہوگا بس غریب کا بچہ مزید غریب ہو جائے گا اور امیر کا بچہ امیر رہے گا اس بجٹ میں عوام کے لیے کوئی خوش خبری نہیں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں