The news is by your side.

Advertisement

دبئی کی اسکول بس میں بند ہوجانے سے 6 سالہ بچہ جاں بحق

دبئی: متحدہ عرب امارات کی ریاست دبئی کی اسکول بس میں بند ہوجانے کے باعث ایک بچہ زندگی کی بازی ہار گیا۔

عرب میڈیا کے مطابق پولیس کی جانب سے بتایا گیا ہے کہ بس عملے کی غفلت کا نشانہ بننے والے 6 سالہ بچے کی شناخت محمد فرحان فیصل کے نام سے ہوئی ہے جس کا تعلق بھارتی ریاست کیرالا سے ہے۔

رپورٹ کے مطابق بچہ اسلامیہ مدرسے سے مرکز تحفیظ القرآن سے دینی تعلیم حاصل کررہا تھا، بچے کی موت بس میں شدید حبس کے باعث ہوئی۔

بچے کے والدین کا کہنا ہے کہ وہ صبح مدرسے جانے کے لیے بس میں سوار ہوا، صبح آٹھ بجے اس کے ساتھی طالب علم باہر آگئے مگر شاید نیند کے باعث وہ اپنی سیٹ پر سوتا رہا، ڈرائیور اور کنڈیکٹر نے بھی بس کو چیک کرنے میں لاپرواہی کا مظاہرہ کیا جس کے باعث اس کی حالت بگڑ گئی اور وہ انتقال کرگیا۔

بس ڈرائیور کو بس میں بچے کی موجودگی کے بارے میں اس وقت پتا چلا جب وہ تین بجے کے قریب بچوں کو چھٹی کے وقت گھر لے جانے کے لیے بس میں سوار ہوا۔

مزید پڑھیں: دبئی: اسکول بس ڈرائیور کی غفلت، بچے حادثے سے بال بال بچ گئے

ڈرائیور نے فوری طور پر ایمبولینس کو طلب کیا تاہم بچے کو جب اسپتال لے جایا گیا تو وہاں اس کی موت کی تصدیق کردی گئی۔

چھ سالہ فرحان کی میت کو ضروری میڈیکل کارروائی والدین کے حوالے کردی گئی۔

محمد فرحان اپنے تین بچوں میں سب سے چھوٹا تھا جس نے تحفیظ القرآن کے مرکز میں اسی سال داخلہ لیا تھا، اس کے والدین طویل عرصے سے دبئی کے علاقے کراما میں مقیم تھے۔

یاد رہے کہ اکتوبر 2014 میں بھی ابوظبی میں 4 سالہ بھارتی بچی اسکول بس کا دروازہ بند ہونے کے باعث زندگی کی بازی ہار گئی تھی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں