The news is by your side.

Advertisement

ٹائلز و سینٹری ایکسپورٹرز اور دکان داروں نے ہڑتال کی دھمکی دے دی

کراچی: ریگولیٹری ڈیوٹی میں اضافے اور اینٹی ڈمپنگ ڈیوٹی کے نفاذ کے خلاف ٹائلز اور سینٹری وئیر کے درآمد کنندگان، تھوک اور خوردہ فروشوں نے ملک گیر شٹر ڈاؤن ہڑتال کی دھمکی دے دی۔

چیئرمین آل پاکستان ٹائلز اینڈ سینیٹری مرچنٹس ایسوسی ایشن امین لاثانیہ نے کہا ہے کہ درآمدہ ٹائلز اور سینیٹری وئیر پر ریگولیٹری ڈیوٹی کی شرح بڑھانے اور اینٹی ڈمپنگ ڈیوٹی کے نفاذ سے 10 ہزار تاجروں کی بقا خطرے میں پڑ گئی۔

کراچی میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے امین لاثانیہ نے کہا کہ حکومت کے اس اقدام سے تعمیراتی لاگت فی اسکوائر میٹر 12 سے 15 فیصد بڑھ گئی ہے، ٹائلز اور سینیٹری وئیر ڈیوٹی و ٹیکسوں کامجموعی حجم 83 سے بڑھ کر 135 فیصد تک پہنچ گیا ہے، حکومت کے اس منی بجٹ سے ٹائلز اور سینیٹری وئیر کی درآمدی لاگت میں 100 فیصد اضافہ ہوگیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ مقامی مارکیٹ میں ٹائلز اور سینیٹری وئیر کی انڈر انوائسنگ اور اسمگلنگ بڑھ جائے گی، درآمدہ ٹائلز اور سینیٹری وئیر پر ریگولیٹری ڈیوٹی کی شرح بڑھانے اور اینٹی ڈمپنگ ڈیوٹی کے نفاذ سے ہزار وں تاجروں کی بقا خطرے میں پڑ گئی ہے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں