شامی فوج پرفضائی حملہ غلط فہمی کی وجہ سےہوا،امریکہ -
The news is by your side.

Advertisement

شامی فوج پرفضائی حملہ غلط فہمی کی وجہ سےہوا،امریکہ

واشنگٹن : امریکہ کاکہناہےکہ شام میں دولت اسلامیہ کے خلاف لڑنے والےشامی فوجیوں پرفضائی حملہ غلط فہمی کی وجہ سےہوا۔

تفصیلات کےمطابق امریکی سینٹرل کمانڈ کاایک بیان میں کہنا ہےکہ امریکی اتحاد کے طیارے رواں سال سترہ ستمبرکوشامی شہردیرالزور میں داعش کو نشانہ بنانے چاہتےتھے تاہم غلطی کی وجہ سےشامی فوجی اس کی زد میں آئے۔

سینٹرل کمانڈ کا کہنا ہے کہ غلطی قابل افسوس ہے اور اس میں شامی فوج کو نشانہ بنانے کا ارادہ نہیں تھا۔حکومتی فورسز پر فضائی حملے میں امریکا، برطانیہ، ڈنمارک اور آسٹریلیا کے جہاز شامل تھے۔

ادھرشامی صدر نے کہا کہ حملہ جان بوجھ کر کیا گیا۔ روس کا کہنا ہے کہ حملےمیں باسٹھ شامی فوجی ہلاک ہوئے تھے۔

اتحادی فوج کے جہازوں نے اس وقت حملے کو روک دیا جب روس نے معلومات فراہم کیں کہ اس حملے میں شامی فوجی نشانہ بن رہے ہیں۔

مزید پڑھیں:امریکہ کی شام میں بمباری،80فوجی جاں بحق

امریکی فوج کے لیفٹیننٹ جنرل جیف ہیریگن نے کہا ہے کہ اس واقعہ میں ہم اس معیار پر پورا نہیں اتر سکیں جو ہم نے اپنا رکھا ہے اور ہم اس سے بہتر کر سکتے تھے۔

مزید پڑھیں:امریکا نے جان بوجھ کر شامی فوج کو نشانہ بنایا، بشارالاسد

دوسری جانب شامی صدر بشارالاسد نے کہا ہےکہ یہ حملہ جان بوجھ کر کیا گیا تھاجس میں 80 شامی فوجی ہلاک ہو گئے تھے۔

واضح رہےکہ رواں ستمبر میں اس حملے کے بعد اقوام متحدہ کا کہنا تھا کہ اسے امریکی اتحاد کی قیادت والے طیاروں سے ہونے والے حملے پر افسوس کااظہار کیاتھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں