The news is by your side.

Advertisement

طالبان نے مغوی آسٹریلوی اور امریکی شہری رہا کر دیے

کابل: افغان طالبان نے اپنے تین رہنماؤں کی رہائی کے بدلے مغوی آسٹریلوی اور امریکی شہری آزاد کردیے۔

تفصیلات کے مطابق طالبان نے مغوی آسٹریلوی اور امریکی شہری رہا کردیے، غیرملکی شہریوں کو اغوا کرکے افغان صوبے زابل میں رکھا گیا تھا، امریکی میڈیا نے رہائی کی تصدیق کردی۔

غیر ملکی خبررساں ادارے کے مطابق آسٹریلوی اور امریکی شہری افغانستان میں امریکی فورسز کے ساتھ اور خیریت سے ہیں، طالبان نے ایک امریکی اور ایک آسٹریلوی پرفیسرز کو تین سال قبل اغوا کیا تھا، افغان صدر اشرف غنی نے غیرملکی مغویوں کے بدلے طالبان کے تین رہنماؤں کو رہا کرنے کا اعلان کیا تھا۔

دوسری جانب انس حقانی سمیت طالبان کے 3سینئر رہنماؤں کو بگرام جیل سے رہا کیا گیا بعد ازاں تینوں دوحہ منتقل کیے گئے، غیر ملکی شہریوں کی رہائی کے بعد اب توقع کی جارہی ہے کہ جلد انہیں بھی چھوڑ دیا جائے گا، طالبان رہنما دوحہ میں قائم ایک گھر میں نظربند ہیں۔

طالبان کے ہاتھوں اغوا کیے گئے پروفیسروں کا تعلق آسٹریلیا اور امریکا سے ہے، جن کی رہائی کے بدلے حکام نے انس حقانی سمیت تین طالبان جنگجوؤں کو آزاد کیا، یہ طالبان رہنما بگرام جیل میں قید تھے۔

واضح رہے کہ انس حقانی کمانڈر سراج الدین حقانی کا بھائی ہے، اس کا شمار حقانی نیٹ ورک کے سرکردہ رہنماؤں میں ہوتا ہے۔ امریکی پروفیسر کا نام کیون کنگ اور آسٹریلوی پروفیسر کا نام ٹموتھی ویکز ہے جو کابل میں امریکی یونی ورسٹی کے اساتذہ تھے اور 2016 میں انہیں کابل میں امریکی یونی ورسٹی کے باہر سے اغوا کیا گیا تھا۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں