امریکی صدر اور عسکری حکام کو مشکوک خطوط بھیجے جانے کا انکشاف
The news is by your side.

Advertisement

امریکی صدر اور عسکری حکام کو مشکوک خطوط بھیجے جانے کا انکشاف

واشنگٹن: امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ اور عسکری حکام کو مشکوک خطوط بھیجے جانے کا انکشاف ہوا ہے، خطوط کے لفافے زہریلے موادسے  بھرے تھے۔

تفصیلات کے مطابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ اور عسکری حکام کے نام ایسے خطوط کا انشکاف ہوا ہے، جو زہریلے موجود میں لپٹے تھے، خطوط کا معائنہ کیا جارہا ہے۔

امریکی حکام کا کہنا ہے کہ پنٹاگون میں مشتبہ زہریلے مواد سے بھرے 2 پیکٹ پکڑے گئے، مشتبہ پیکٹ قریبی اسکریننگ سینٹر پر پکڑے گئے، دونوں لفافے مشتبہ زہررائسن سے بھرے تھے۔

حکام کے مطابق پیکٹ وزیردفاع اور نیوی ہیڈ ایڈمرل جان رچرڈسن کے نام بھیجے گئے تھے، صدر ٹرمپ کو بھیجے گئے مشکوک خط کا بھی معائنہ کیا جارہا ہے۔

حکام کا کہنا تھا کہ ٹرمپ کے نام بھیجا گیا خط وائٹ ہاؤس پہنچنے سے قبل ہی پکڑا گیا۔ خیال رہے کہ امریکی حکام نے ٹرمپ کو بھیجے گئے خط میں زہر کے شواہد ملنے سے متعلق کچھ بتانے سے گریز کیا۔

خیال رہے کہ مئی 2013 میں امریکی وائٹ ہاؤس میں ڈاک کی چھان بین کرنے والوں کو ایک ایسا مشکوک خط ملا جس میں ممکنہ طور پر اسی طرح کا زہر آلود مواد تھا۔

واضح رہے کہ اس وقت کے امریکی صدر باراک اوباما کو ارسال کیا جانے والے لفافے میں لکھا ہوا تھا کہ ’تم نے میر ی بات نہیں مانی ،اب تمہیں او رلوگوں کو مرنا ہو گا‘، بعد ازاں کوئی وضاحت سامنے نہیں آئی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں