بشارالاسد کا جنگی جنون ادلب میں ہزاروں افراد کی موت کا سبب بن سکتا ہے، ٹرمپ trump
The news is by your side.

Advertisement

بشارالاسد کا جنگی جنون ادلب میں ہزاروں افراد کی موت کا سبب بن سکتا ہے، ٹرمپ

واشنگٹن: امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے خبردار کیا ہے کہ شامی رجیم اور بشارالاسد کا جنگی جنون ادلب صوبے میں ہزاروں بے گناہ شہریوں کی موت کا سبب بن سکتا ہے۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر اپنے پیغام میں کیا، ٹرمپ نے کہا کہ بشارالاسد اور ان کے حلیف روس ادلب میں بے مقصد اور بے ترتیب فوج کشی سے باز رہیں۔

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے خبردار کیا کہ اگر ادلب پر حملہ کیا گیا تو اس کے نتیجے میں ہزاروں بے گناہ شہری مارے جاسکتے ہیں۔

ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا کہ ادلب پر حملہ کرکے بشارالاسد، ایران اور روس بہت بڑی غلطی کریں گے، اس حملے کے نتائج انتہائی خطرناک اور بھیانک ہوسکتے ہیں۔

دوسری جانب اقوام متحدہ نے بھی شام میں اتحادی افواج کی ادلب میں حملے کی تیاری پر ردعمل دیتے ہوئے کہا ہے کہ اس حملے میں بڑے پیمانے پر عام شہریوں کے جانی و مالی نقصان کا خدشہ ہے جس کے سدباب کے لیے ہر ممکن اقدام کیا جانا چاہئے۔

اقوام متحدہ میں امریکی مندوب نکی ہیلی نے اپنے ٹویٹ میں کہا کہ سب کی آنکھیں ادلب پر ہیں کہ روس، ایران اور شامی حکومت کیا کارروائی کرتی ہے، امریکا نے شامی حکومت پر الزام عائد کیا ہے کہ ادلب میں کیمیائی ہتھیار استعمال کیے جائیں گے۔

ایرانی وزیر خارجہ جواد ظریف نے بھی ادلب کو دہشت گردوں سے پاک کرنے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ ادلب گورنری موجود دہشت گرد تنظیموں کے خلاف بھرپور کارروائی کرنا ہوگی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں