The news is by your side.

Advertisement

یوکرائن پر حملہ : امریکی صدر بائیڈن کا یوکرینی صدر سے رابطہ

روس کے یوکرائن پر حملے کے بعد امریکی صدر نے یوکرائن کے صدر سے ٹیلی فونک رابطہ کیا ہے،  جبکہ یوکرائنی صدر کاکہنا ہے کہ معاملے کو بات چیت سے حل کرنا چاہتے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق امریکی صدر جو بائیڈن نے روس کی جانب سے یوکرین پر حملے کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ یوکرین پر روسی حملہ تباہ کن انسانی نقصان کا سبب بنے گا۔

یوکرائنی علاقے میں حملے کے فوری بعد امریکی صدر جو بائیڈن نےیوکرائنی  صدر سے ٹیلی فون پر رابطہ کیا اور روسی فوج کی جانب سے کی گئی کارروائی کی شدید الفاظ میں مذمت کی۔

امریکی صدر جو بائیڈن نے کہا کہ یوکرائن پر حملے کے نتیجے میں دنیا روس کو جوابدہ ٹھہرائے گی، اس وقت روس کی اسی فیصد فوج یوکرائن کی سرحد پر موجود ہے، روسی فوج کی نقل و حرکت پر پوری نظر ہے۔

دوسری جانب یوکرائنی صدر کا کہنا ہے کہ ہم کسی صورت جنگ نہیں چاہتے، ہم آج بھی بات چیت سے مسئلہ حل کرنا چاہتے ہیں۔

علاوہ ازیں سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر امریکی صدر جوبائیڈن نے ایک پیغام جاری کیا ہے جس میں ان کا کہنا ہے کہ یوکرین کے صدر نے آج رات رابطہ کیا۔

ان کا کہنا تھا کہ یوکرین کے صدر کو ان اقدامات سےآگاہ کیا ہے جو عالمی سطح پر مذمت کیلئےاٹھا رہے ہیں، اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل میں آج اہم اجلاس ہوگا۔

امریکی صدر کا مزید کہنا تھا کہ کل میں جی 7ممالک کے رہنماؤں سے ملاقاتیں کروں گا، امریکا اور اس کے اتحادی روس پر مزید سخت پابندیاں عائد کریں گے، ہم یوکرین اور ان کے عوام کو مدد فراہم کرتے رہیں گے۔

ایک اور ٹوئٹر پیغام میں انہوں نے کہا کہ اس حملے سے ہونے والی ہلاکتوں اور تباہی کا ذمہ دار اکیلا روس ہے اور امریکہ اور اس کے اتحادی اور شراکت دار متحد اور فیصلہ کن انداز میں جواب دیں گے، دنیا روس کا احتساب کرے گی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں