The news is by your side.

Advertisement

امریکی سابق فوجی کرائے پر یوکرین میں روس کیخلاف جنگ لڑنے پر آمادہ

امریکی میڈیا نے دعویٰ کیا ہے کہ امریکا کے 3 ہزار سابق امریکی فوجی کرائے پر یوکرین جاکر روس کیخلاف جنگ لڑنے پر آمادہ ہیں۔

امریکی خبررساں ادارے کے مطابق تین ہزار امریکی فوجی کرائے پر یوکرین جاکر روس کے خلاف لڑیں گے۔

واشنگٹن میں یوکرین کے سفارتخانے کے ایک نمائندے نے مقامی میڈیا کو بتایا کہ یوکرین کے غیرملکی رضاکاروں کو بھرتی کرنے کے اعلان کا جواب دیتے ہوئے تقریباْ تین ہزار امریکیوں نے یوکرین جاکر روس کا مقابلہ کرنے کی حامی بھری ہے۔

واضح رہے کہ مغربی ممالک یوکرین میں لڑنے کیلیے اپنی افواج نہیں بھیج رہے ہیں لیکن وہ یوکرین کو اسلحہ فراہم کررہے ہیں تاکہ روس کیخلاف جنگ میں یوکرین کی مدد کی جاسکے۔

ان مغربی ممالک نے روس، روس کی ارب پتی شخصیات، روسی صدر پیوٹن کے قریبی ساتھیوں اور رہنماؤں پر اقتصادی پابندیاں بھی عائد کردی ہیں۔

یوکرین کے صدر گزشتہ دنوں ولادیمیر زیلنسکی اور دیگر سینیئر یوکرین حکام نے روس کے خلاف لڑائی کی مدد کیلیے غیرملکی رضاکاروں کے ’’ایک بین الاقوامی لشکر‘‘ کی تشکیل پر زور دیا تھا۔

زیلنسکی نے یہ دعویٰ بھی کیا تھا کہ 16 ہزار غیرملکیوں نے رضاکار کے طور پر روس کے خلاف جنگ میں یوکرین کی مدد کرنے کی حامی بھری ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں