شیخ محمد المکتوم کا یواے ای کو’خوشیوں کی سرزمین‘ بنانے کا اعلان -
The news is by your side.

Advertisement

شیخ محمد المکتوم کا یواے ای کو’خوشیوں کی سرزمین‘ بنانے کا اعلان

دبئی: متحدہ عرب امارات کے وزیراعظم اور دبئی کے حکمران شیخ محمد بن راشد المکتوم نے اعلان کیا ہے کہ وہ اس خطے کو خوشیوں کی سرزمین بنائیں گے ‘ جہاں مقامی افراد اور سیاحوں کے لیے سیر و تفریح کے بھرپور مواقع میسر ہوں۔

تفصیلات کے مطابق یہ اعلان گزشتہ روز شیخ محمد بن راشد المکتوم نے بلیو آئی لینڈ کے دورے کے موقع پر کیا۔ ان کا کہنا تھا کہ دبئی اور متحدہ عرب امارات میں جاری پراجیکٹس کا مقصد اس بات کو یقینی بنانا ہے کہ سرمایہ کاری اور سیاحت کے لیے امارات دنیا بھر کی پہلی ترجیح ہوں۔

بلیو آئی لینڈ ایک مصنوعی جزیرہ ہے جو کہ جمیرا نامی ساحل کے رہائشی علاقے کےمدمقابل میراس آف کے مقام پر تعمیر کیا گیا ہے۔ا نہوں نے آٹھ ارب درہم کی لاگت سے تعمیر ہونے والے اس عظیم منصوبے کا جائزہ لیا۔ جزیرے پررہائش ‘ کاروبار‘ اسپتال‘ فوڈ اور دیگر تفریحی سرگرمیاں میسر ہوں گی۔

یہ بھی پڑھیں


اماراتی مردوں کو دوسری شادی کے لیے گھر الاؤنس دینے کا اعلان

دبئی کے حکمران کا کہنا تھا کہ ہم چاہتے ہیں کہ ہمارے ملک کے شہری اور یہاں سیاحت کے لیے آنے والے ‘ دونوں اقسام کے افراد اس سرزمین کو ’خوشیوں اورکی سرزمین ‘کے نام سے جانیں، خصوصاً وہ لوگ جو بلند ارادے اوربڑے خواب رکھتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہمارے ارد گرد پھیلا یہ منصوبہ ہمارے اعلیٰ معیارات کی گواہی دے رہا ہے۔

ا ن کا کہنا تھا کہ ہمارے زیرِ تکمیل منصوبے مکمل ہونے پر ہزاروں کی تعداد میں نوکریاں پیدا ہوں گی اور اس سے ہمارے نوجوانوں کو قوم کے مستقبل کے لیے اپنا حصہ ڈالنے میں مدد ملے گی۔ اسی سبب نئے خیالات اور ایجادات کرنے کی صلاحیت رکھنے والوں کو یہاں ہمیشہ خوش آمدید کہا جاتا ہے۔

یاد رہے کہ بلیو واٹر پراجیکٹ کا سب سے اہم منصوبہ ’عین دبئی‘ ہے جو کہ دنیا کا سب سے بلند اور بڑا وہیل ہے جس سے شہر کا نظا رہ کیا جاسکتا ہے۔ اس کی بلندی 210 میٹر ہے جوکہ دنیا میں کہیں بھی نہیں ہے۔ دبئی میڈیا آفس کے مطابق یہ وہیل ‘ دنیا کا بلند ترین ’روپ کلائمبنگ پلیٹ فارم‘ بھی ہے جسے سیاح سر کرسکیں گے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں‘ مذکورہ معلومات  کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہچانے کےلیے سوشل میڈیا پرشیئر کریں

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں