The news is by your side.

Advertisement

کرونا سے نمٹنے کیلئے اب دنیا کو کیا کرنا ہوگا؟ عالمی ادارہ صحت نے بتادیا

جنیوا: عالمی ادارہ صحت نے ڈائریکٹر جنرل ڈاکٹر ٹیڈروس نے کہا ہے کہ کوئی ملک اکیلا اس وبا سے نہیں لڑسکتا، کرونا پر قابو پانے کے لیے عالمی یکجہتی کی ضرورت ہے۔

تفصیلات کے مطابق ڈائریکٹر جنرل ڈبلیو ایچ او نے ہدایت کی کہ دنیا کے تمام ممالک مشترکہ سیکورٹی کے لیے مل کرکام کریں، تاکہ وائرس کو محدود سے محدود تر کرکے اس پر قابو پایا جاسکے۔

انہوں نے کہا کہ ہم سب کے محفوظ ہونے تک کوئی محفوظ نہیں، ہم سب کو یہ سبق سیکھ لینا چاہیے، دنیا وائرس سے نمٹنے کے لیے ناکافی تیاریوں کی قیمت ادا کررہی ہے۔

کرونا ویکسین کی جلد دستیابی، ڈبلیو ایچ او نے امید باندھ دی

ڈاکٹرٹیڈروس کا مزید کہنا تھا کہ وائرس کے خلاف تیاری ایک وقت کی نہیں مسلسل سرمایہ کاری ہے۔

یاد رہے کہ 20 جون کو ڈبلیو ایچ او کی سائنسدانوں کی ٹیم کی سربراہ سومیا سوامناتھن نے پریس کانفرنس میں بتایا تھا کہ رواں سال کورونا سے بچاؤ کی ویکیسن کی دو ارب خوراکیں دستیاب ہوں گی۔

انہوں نے یہ بھی کہا تھا کہ اس وقت دنیا کے مختلف ممالک میں بنائی جانے والی 10 سے زائد ویکسین کے انسانوں پر کلینیکل ٹرائلز جاری ہیں، آئندہ چند ماہ میں یہ ویکسین عام استعمال کے لیے دستیاب ہوگی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں